Sunday - 2018 Dec 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 183373
Published : 10/9/2016 13:23

داعش اپنی آمدنی کے سب سے بڑے ذریعے سے محروم

جنوبی موصل میں عراقی فوج کی کارروائیوں سے داعش کا سب سے بڑا ذریعہ آمدنی اس کے ہاتھ سے نکل گیا۔

جنوبی موصل میں عراقی فوج کی کارروائیوں سے داعش کا سب سے بڑا ذریعہ آمدنی اس کے ہاتھ سے نکل گیا۔
نینوا فوجی آپریشن کے سربراہ نجم الجبوری نے کہا ہے کہ القیارہ علاقے کے نصف سے زیادہ تیل کے کنؤوں کے داعش کے قبضے سے نکل جانے سے اسے اپنی آمدنی کے سب سے بڑے ذریعے سے ہاتھ دھونا پڑا ہے،ان کنؤوں سے داعش کو ہرمھینے دس لاکھ ڈالر کی آمدنی ہوتی تھی-
 نجم الجبوری نے مزید کہا کہ عراقی فوج نے داعش کے قبضے سے ساٹھ سے زیادہ تیل کے کنویں آزاد کرا لئے ہیں-
نینوا فوجی آپریشن کے سربراہ نے مزید کہا کہ  تیل کے ان کنؤوں پرفوج کے کنٹرول  سے داعش دھشت گرد گروہ کو بھاری معاشی نقصان پہنچا ہے-
صوبہ نینوا کے صدر مقام موصل سے ساٹھ کلومیٹر کے فاصلے پر واقع القیارہ علاقہ تیل سے مالا مال ہے جو گذشتہ دوبرسوں سے تکفیری دھشت گرد گروہ داعش کے قبضے میں تھا-
 سحر ٹی وی


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 Dec 16