Sunday - 2018 july 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 183753
Published : 13/10/2016 17:53

علامہ طباطبائی عالم اسلام کے ایک عظیم فلسفی

علامہ طباطبائی قم میں قیام سے لے کر زندگی کے خاتمے تک حوزہ علمیہ قم میں المیزان فی تفسیر القرآن کی تالیف اور فلسفے کی تدریس میں 20سال ممشغول رہے اور بالآخر اس تفسیر کو 1392 ھ ق کی ۲۳ ویں کی رات یعنی شب قدر بمطابق 1350 شمسی کو مکمل کیا ۔24آبان 1360 شمسی کو اس جہان کو الوداع کہا اور آپ کو حضرت معصومہ کے حرم میں مسجد بالا سر کے پاس دفن کیا گیا۔

ولایت پورٹل:
سید محمد حسین طباطبائی اپنے زمانے کے ایک بہت بڑے فلسفی مانے جاتے تھے،آپ کی ولادت ۱۲۸۱ هـ. ش (۲۹ ذی القعده ۱۳۲۱ هـ. ق) کو تبریز کے نواحی گاؤں شادگان میں ہوئی1304 ھ  میں دینی تعلیم کے مراحل کیلئے نجف گئے ۔وہاں آیت اللہ محمد حسین غروی اصفہانی مشہور آقا کمپانی،آیت اللہ محمد حسین نائینی، آیت الله حجت کوه کمره ای، آیت الله حسین بادکوبہ،آیت اللہ ابوالقاسم خوانساری اور آیت اللہ سید علی قاضی جیسے علما سے علم حاصل کیا،مقام اجتہاد حاصل کرنے کے بعد 1314 شمسی کو تبریز واپس لوٹ آئے،1325 شمسی کو قم اقامت اختیار کی۔
علامہ طباطبائی قم میں قیام سے لے کر زندگی کے خاتمے تک حوزہ علمیہ قم میں المیزان فی تفسیر القرآن کی تالیف اور فلسفے کی تدریس میں 20سال ممشغول رہے اور بالآخر اس تفسیر کو 1392 ھ ق کی ۲۳ ویں کی رات یعنی شب قدر بمطابق 1350 شمسی کو مکمل کیا ۔24آبان 1360 شمسی کو اس جہان کو الوداع کہا اور آپ کو حضرت معصومہ کے حرم میں مسجد بالا سر کے پاس دفن کیا گیا،اصول فلسفہ و روش رئالیسم، بدایۃ الحکمۃ، نھایۃ الحکمۃ و شیعہ در اسلام آپ کا علمی سرمایا گنی جاتی ہیں۔
بنیادی طور پر تفسیر میزان قرآن کے ساتھ قرآن کی تفسیر کے اصول پر لکھی گئی ہے،اس کا مطلب ہے یہ کہ قرآن کی تفسیر کا پہلا معیار خود قرآن ہے،علامہ طباطبائی یقین رکھتے ہیں کہ جب خود قرآن تبیاناً لِکُلّ شئ،ہر چیز کا بیان گر)کے ساتھ اپنی تعریف کرتا ہے تو کیسے ممکن ہے کہ وہ اپنا معنی بیان کرنے میں کسی دوسرے کا محتاج ہو،یہ صحیح ہے کہ قرآن کا ظاھر اور باطن ہے اور ہم قرآن کی تاویل اور باطنی معنا کے سمجھنے میں قرآن کے شارحین اور حقیقی مفسرین پیغمبر اور آئمہ معصومین علیہم السلام کے بیان کے محتاج ہیں لیکن بنیادی طور پر ہم قرآن فہمی میں کسی دوسری چیز کے محتاج نہیں ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 july 22