Friday - 2019 January 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 183848
Published : 19/10/2016 18:42

تحریک کربلا کے متعلق رہبر انقلاب کا نظریہ:

حضرت ابا عبداللہ علیہ السلام کا تاریخ اسلام میں منفرد مقام

کوئی بھی دن عاشور جیسا نہ تھا اور کوئی بھی فداکاری ان بزرگواروں جیسی نہ تھی فداکاری تاریخ کی اس عظیم ہستی اور ان بزرگواروں کے سرکاتاج کرامت بن گئی۔

ولایت پورٹل:
امام حسین(ع)کی فداکاری،اسلامی افتخار کا تاج کرامت ہے،یہ سچ ہے کہ اگر ہمارے دیگر ائمہ(ع) اس دور اورحالات وواقعات سے روبرو ہوتے تو وہ بھی وہی کام کرتے جو حضرت ابی عبداللہ علیہ السلام نے کیا،لیکن حقیقت یہ ہے کہ اس کا قرعہ اس عظیم ہستی کے نام نکلا اور خداوندعالم نے اس عظیم فداکاری کے لئے (جہاں تک ہم نے پہچانا ہے) جو پوری تاریخ میں بے مثال تھی،حضرت(ع) کا انتخاب کیا۔
حسن بن علی علیہ السلام اور خاندان پیغمبر اکرم(ص)کے دیگر بزرگوں نے فرمایا ہے:«لَایَوْمَ کَیَوْمِکَ یَا اَبَا عَبْدِاللہُ»۔(۱)
کوئی بھی دن عاشور جیسا نہ تھا اور کوئی بھی فداکاری ان بزرگواروں جیسی نہ تھی فداکاری تاریخ کی اس عظیم ہستی اور ان بزرگواروں کے سرکاتاج کرامت بن گئی اور وہ سبھی لوگ اسلام کے مجموعی افتخار کا آغاز اسلام سے اس وقت تک کے لئے سرکے تاج کا نگینہ بن گئے، اس بابت ان کا کوئی بھی ثانی اور مقابل نہیں ہوسکتا ہے۔(۲)
.............................................................................................................................................................................
حوالہ جات:
۱۔مجلسی،محمد باقر،بحار الانوار،ج۴۵،ص۲۱۸۔
۲۔یوم پاسداران اسلامی اور یوم امام حسین(ع)کے موقعے پر عوام اور مختلف مملکتی اداروں کےذمہ داروں کی ایک کثیر تعداد سے ملاقات کے دوران خطاب،۱۸ فروری ۱۹۹۱ عیسوی

 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2019 January 18