Tuesday - 2018 Oct. 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 184881
Published : 2/1/2017 19:0

پوروپ میں خواتین کے اقدار کی پامالی:

اہل مغرب فیشن اور فضول خرچیوں کی ترویج کے لئے عورت کو استعمال کرتے ہیں:رہبر انقلاب

عصر حاضر کے مغربی آئیڈیل کا سرچشمہ قدیم رومی و یونانی ماڈل ہے،اس دور میں بھی عورت صرف اور صرف مرد کی لذت جوئی اور اس کی خواہشات کی تسکین کا ایک ذریعہ تھی اور سب کچھ اسی کے ماتحت تھی،آج بھی وہ یہی چاہتے ہیں،یہی اہل مغرب کی اصلیت ہے۔


ولایت پورٹل:
مغرب نے دونوں جنسوں کے درمیان جنسیات کا کھلواڑاور فیشن اور فضول خرچیوں کی ترویج
وہ لوگ مسلمان خاتون کی کون سی صفت کے زیادہ دشمنی ہیں؟ اس کے حجاب کے۔۔۔ اس لئے کہ ان کا تمدن اسے قبول نہیں کرتا۔ ایسے ہیں یوروپی لوگ۔ ان کا یہ ماننا ہے کہ جو ہم سمجھتے ہیں وہی صحیح ہے اور پوری دنیا کو ہمارا اتباع کرنا چاہئے،ان کی کوشش یہ ہے کہ اپنی جہالت و نادانی کو دنیا کی معرفت و شناخت پر مسلط رکھیں،وہ مغربی طرز کی عورت کو پوری دنیا میں رائج کرنا چاہتے ہیں۔ مغربی طرز کی عورت یعنی کھلے عام فیشن، بناؤ سنگھار اور زینت و آرائش کی نمائش اور دونوں جنسوں کے درمیان جنسی تعلقات کی آزادی،وہ عورت کے ذریعہ ان چیزوں کو عام کرنا چاہتے ہیں۔
قدیم روم، عصرحاضر کی مغربی خاتون کے کمال کا نمونہ
عصر حاضر کے مغربی آئیڈیل کا سرچشمہ قدیم رومی و یونانی ماڈل ہے،اس دور میں بھی عورت صرف اور صرف مرد کی لذت جوئی اور اس کی خواہشات کی تسکین کا ایک ذریعہ تھی اور سب کچھ اسی کے ماتحت تھی،آج بھی وہ یہی چاہتے ہیں،یہی اہل مغرب کی اصلیت ہے۔(۱)
..................................................................................................................................................................................................................................
حوالہ جات:
۱۔ولادت حضرت زینب(س) اور نرس ڈے کے موقع پر نرسوں کے ایک عظیم اجتماع سے خطاب۔۱۳ نومبر سن ۱۹۹۱ ء ۔
 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Oct. 16