Thursday - 2018 Oct. 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 184905
Published : 3/1/2017 18:44

اگر امریکہ ایٹمی معاہدہ ختم کرے گا توعالمی سطح پر الگ تھلگ پڑ جائےگا:معروف امریکی نظریہ پرداز

معروف امریکی نظریہ پرداز نوام چامسکی نے کہا ہے کہ اگر امریکا کے نومنتخب صدر نے ایٹمی معاہدے کو منسوخ کرنے کی اپنی دھمکی کو عملی جامہ پہنایا توامریکا عالمی سطح پر الگ تھلگ پڑ جائےگا.


ولایت پورٹل:امریکا کے معروف نظریہ پرداز نوام چامسکی نے امریکا کے صدر کی حیثیت سے ٹرمپ کے انتخاب کے بارے میں کہا کہ ٹرمپ کے منتخب ہوجانے سے دنیا کو اس وقت انسانیت کی بقا کے تعلق سے خطرہ لاحق ہوگیا ہے،انہوں نے کہا کہ ٹرمپ کے برسراقتدار آنے کے بعد امریکا عالمی سطح پر تنہائی کا شکار ہوجائے گا ،نوام چامسکی نے کہا کہ واشنگٹن کو عالمی سطح پر الگ تھلگ کرنے کا ایک قدم اس وقت اٹھایا جائے گا جب ٹرمپ ایٹمی معاہدے کو منسوخ کردینے کی اپنی دھمکی پر عمل  کریں گے،ان کا کہنا تھا کہ پانچ جمع ایک گروپ میں شامل دیگر ممالک ایٹمی معاہدے پرعمل کررہے ہیں اور اس کا مطلب یہ ہوگا کہ یہ ممالک ایران کے خلاف امریکی پابندیوں کی پروا نہیں کررہے ہیں،دریں اثنا امریکا کے دسیوں دانشوروں،سائنسدانوں اور سیاسی ماہرین نے امریکا کے نومنتخب صدر ٹرمپ کو ایک خط ارسال کرکے ایران کے ساتھ ایٹمی معاہدے کی پاسداری کی ضرورت پر زوردیا ہے،اخبار نیویارک ٹائمز نے لکھا ہے کہ امریکا کے سینتیس معروف دانشوروں اور اہم شخصیات نے جن میں نوبل انعام یافتہ افراد ، ایٹمی ہتھیار بنانے والے سابق ماہرین اور وائٹ ہاؤس کے سابق مشیران بھی شامل ہیں ٹرمپ کو ارسال کردہ خط پر دستخط کئے ہیں،ان امریکی دانشوروں اور اہم شخصیات نے ٹرمپ سے کہا ہے کہ وہ ایران کے ساتھ ہونے والے ایٹمی معاہدے جیسے اہم سرمائے کی حفاظت کریں –
سحر




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Oct. 18