Saturday - 2018 Dec 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 184935
Published : 6/1/2017 7:29

اسرائیل نے2016 میں32فلسطینی بچوں کو براہ راست گولی مار کر شہید کیا

عرب ذرائع کے مطابق سال2016 فلسطینی بچوں کے لیے بھی تباہ کن ثابت ہوا جس میں اسرائیلی افواج نے اپنی درندگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے معصوم بچوں پر گولیاں برسائیں جس سے 32 بچے شہید ہوگئے۔


ولایت پورٹل:فلسطین الیوم نےنقل کیا ہے کہ سال 2016 فلسطینی بچوں کے لیے بھی تباہ کن ثابت ہوا جس میں اسرائیلی افواج نے اپنی درندگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے معصوم بچوں پر گولیاں برسائیں جس سے 32 بچے شہید ہوگئے۔ فلسطینی بچوں کو اسرائیلی افواج کے چھاپوں، مقبوضہ مغربی کنارے میں نہتے افراد کے احتجاج اور دیگر کارروائیوں میں نشانہ بنایا گیا تھا،فلسطینی احتساب کمیٹی کے مطابق مرنے والے 32 بچوں میں سے19 کی عمریں16 سے17 برس اور13 کی عمریں13 سے15 برس تھیں۔ رپورٹ کے مطابق ویڈیو اور تصاویر فوٹیج کے ثبوت آنے کے باوجود بھی اسرائیلی فوجی اہلکاروں کو بہت کم سزا ملتی ہے اور ان پر مقدمات چلانے میں تاخیری حربے استعمال کیے جاتے ہیں۔ فلسطینی احتساب کمیٹی کے سربراہ آئی ابو ایکتیش کا کہنا ہے کہ " اسرائیلی افواج " شوٹ کرو اور قتل کی پالیسی پر گامزن ہے اور اس تشدد کی بظاہرکوئی معقول وجہ نظر نہیں آتی۔
مہر



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Dec 15