Monday - 2018 Dec 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 186400
Published : 29/3/2017 6:39

داعش نے دی ایران کو حملے کی دھمکی

قابل ذکر ہے کہ عراق میں داعش کا سب سے اہم ٹھکانہ شہر موصل مانا جاتا تھا اور اب وہ عراقی فورسز کے کامیاب آپریشنز کے بعد رفتہ رفتہ اس کے ہاتھ سے نکلتا جارہا ہے، ایسے حالات میں تکفیری دہشتگردوں کی جانب سے ایران کے خلاف ویڈیو جاری کرنا حیرت انگیز معلوم ہوتا ہے، ویڈیو کے آخر میں ابو مجاہد البلوشي نامی دہشتگرد نے کہا کہ داعش، ایران پر قبضہ کر لے گی۔

ولایت پورٹل:تکفیری دہشت گرد گروہ داعش نے فارسی زبان میں ایک ویڈیو جاری کرکے ایران کو دھمکی دیتے ہوئے ایران کے سنی مسلمانوں کو اپنے ملک کے خلاف بھڑکانے کی کوشش کی ہے،داعش نے 37 منٹس پر مشتمل فارسی زبان میں ایک ویڈیو جاری کیا ہے جس میں تین افراد ایران کو دھمکیاں دیتے نظر آرہے ہیں، یہ تینوں دہشت گرد ایران میں بولی جانے والی تین اہم زبانوں کی نمائندگی کرنے کی کوشش کر رہے ہیں، ابو فاروق الفارسي نامی شخص فارسی میں، ابو مجاہد البلوشي، بلوچی میں اور ابو سعد الاهوازی، عربی زبان میں بات کرتے ہوئے دکھائی دے رہے ہیں۔
داعش نے اس ویڈیو میں سنی مسلمانوں کو نام نہاد جہاد کی دعوت دےکر حکومت کے خلاف بھڑکانے اور ایران میں بدامنی پیدا کرنے کی کوشش کی ہے،اس ویڈیو میں داعش کا کہنا ہے ايران کی حکومت ہمیشہ سنیوں کا قتل عام کرتی ہے اس لیے سنیوں کو اپنے حقوق کے لئے ہتھیار اٹھا کر ایران کی حکومت کے خلاف اٹھ کھڑے ہوجانا چاہئے،تکفیری دہشت گرد گروہ نے ایران کے کچھ سنی مذہبی رہنماؤں اور ارکان پارلیمنٹ کی تصاویر جاری کر کے انہیں کافر قرار دیا اور کہا کہ یہ لوگ ایران کی "رافضی” حکومت سے تعاون کر رہے ہیں۔
قابل ذکر ہے کہ عراق میں داعش کا سب سے اہم ٹھکانہ شہر موصل مانا جاتا تھا اور اب وہ عراقی فورسز کے کامیاب آپریشنز کے بعد رفتہ رفتہ اس کے ہاتھ سے نکلتا جارہا ہے، ایسے حالات میں تکفیری دہشتگردوں کی جانب سے ایران کے خلاف ویڈیو جاری کرنا حیرت انگیز معلوم ہوتا ہے، ویڈیو کے آخر میں ابو مجاہد البلوشي نامی دہشتگرد نے کہا کہ داعش، ایران پر قبضہ کر لے گی۔
ابلاغ




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 17