Wed - 2018 August 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 186471
Published : 4/4/2017 18:28

امام علی نقی علیہ السلام کا زہد

حضرت امام علی نقی(ع) اپنے جد امیرالمؤمنین(ع) کی طرح زندگی بسر کر تے تھے جو دنیا میں سب سے زیادہ زاہد تھے ،انھوں نے دنیا کو تین مرتبہ طلاق دی تھی جس کے بعد رجوع نہیں کیا جاتا ہے اپنی خلافت کے دوران انھوں نے مال غنیمت میں سے کبھی اپنے حصہ سے زیادہ نہیں لیا ،آپ کبھی کبھی بھوک کی وجہ سے اپنے شکم پر پتھر باندھتے تھے،وہ اپنے ہاتھ سے کھجور کے پتوں کی بنی ہوئی نعلین پہنتے تھے۔

ولایت پورٹل:حضرت امام علی نقی(ع)نے اپنی پوری زندگی میں زہد اختیار کیا ،اور دنیا کی کسی چیز کو کوئی اہمیت نہیں دی مگر یہ کہ اس چیز کا حق سے رابطہ ہو ،آپ نے ہر چیز پر اللہ کی اطاعت کو ترجیح دی، راویوں کا کہنا ہے کہ مدینہ اور سامراء میں آپ(ع) کے مکان میں کوئی چیز نہیں تھی ،متوکل کی پولیس نے آپ کے مکان پر چھاپا مارا اور بہت ہی دقیق طور پر تلاشی لی لیکن ان کو دنیا کی زندگی کی طرف مائل کر نے والی کو ئی چیز نہیں ملی ،اس وقت امام ایک کھلے ہوئے گھر میں بالوں کی ایک ردا پہنے ہوئے تھے اور آپ زمین پر بغیر فرش کے ریت اور کنکریوں پر تشریف فرما تھے۔
سبط احمد جوزی کا کہنا ہے:بے شک امام علی نقی(ع) دنیا کی کسی چیز سے بھی رغبت نہیں رکھتے تھے ، آپ مسجد سے اس طرح وابستہ تھے جیسے اس کالازمہ ہوں ،حکومت نے جب آپ کے گھر کی تلاشی لی تو اس میں مصاحف ، دعائوں اور علمی کتابوں کے علاوہ اور کچھ نہیں پایا ۔
حضرت امام علی نقی(ع) اپنے جد امیرالمؤمنین(ع) کی طرح زندگی بسر کر تے تھے جو دنیا میں سب سے زیادہ زاہد تھے ،انھوں نے دنیا کو تین مرتبہ طلاق دی تھی جس کے بعد رجوع نہیں کیا جاتا ہے اپنی خلافت کے دوران انھوں نے مال غنیمت میں سے کبھی اپنے حصہ سے زیادہ نہیں لیا ،آپ کبھی کبھی بھوک کی وجہ سے اپنے شکم پر پتھر باندھتے تھے،وہ اپنے ہاتھ سے کھجور کے پتوں کی بنی ہوئی نعلین پہنتے تھے، اسی طرح آپ کے جوتوں کا تسمہ(بند) بھی کھجور کی پتیوں کا تھا ،اسی روش اور طریقہ پر امام علی نقی(ع) اور دوسرے ائمہ(ع) گامزن رہے انھوں نے غریبوں کے ساتھ زندگی کی سختی اور سخت لباس پہننے میں مواسات فرمائی۔

 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 August 15