Sunday - 2018 April 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 186706
Published : 16/4/2017 18:32

روزانہ کتنی مقدار میں نمک کا استعمال فائدہ مند؟

امریکا کے نیشنل انسٹیٹوٹ آف ہیلتھ کے مطابق ایک انسان کو روزانہ 2300 سے 3400 ملی گرام نمک استعمال کرنا چاہیئے یعنی آدھا چائے کا چمچ،تو نمک ہمارے جسم کے ساتھ کیا کرتا ہے؟ درحقیقت نمک کا معتدل استعمال فائدہ مند ہوتا ہے کیونکہ ہمیں سوڈیم اور کلورائیڈ کی ضرورت ہوتی ہے تاکہ ہمارے اعضاء مناسب طریقے سے کام کرسکیں۔

ولایت پورٹل:نمک ایک ایسی چیز ہے جس کے بغیر کسی کھانے کو ذائقہ دار نہیں بنایا جاسکتا ہے اور بیشتر افراد کھانوں میں اس کی زیادہ مقدار ہی چھڑکنا پسند کرتے ہیں،مگر سوال یہ ہے کہ ایک انسان کو روزانہ کتنا نمک استعمال کرنا چاہیئے؟ امریکا کے نیشنل انسٹیٹوٹ آف ہیلتھ کے مطابق ایک انسان کو روزانہ 2300 سے 3400 ملی گرام نمک استعمال کرنا چاہیئے یعنی آدھا چائے کا چمچ،تو نمک ہمارے جسم کے ساتھ کیا کرتا ہے؟ درحقیقت نمک کا معتدل استعمال فائدہ مند ہوتا ہے کیونکہ ہمیں سوڈیم اور کلورائیڈ کی ضرورت ہوتی ہے تاکہ ہمارے اعضاء مناسب طریقے سے کام کرسکیں،مختلف تحقیقی رپورٹس کے مطابق غذا میں بہت زیادہ نمک امراض قلب اور ہائی بلڈ پریشر کا باعث بنتا ہے، تاہم یہ جاننا دلچسپی سے خالی نہیں کہ ہمارا جسم نمک کو کیسے استعمال کرتا ہے،ہمارا جسم سوڈیم کو دوران خون اور بلڈ پریشر کو ریگولیٹ کرنے کے لیے استعمال کرتا ہے۔
سوڈیم ایک مالیکیول کے طور پر کام کرکے بھی مسلز اور اعصاب کو کام کرنے میں مدد دیتا ہے،نمک میں شامل کلورائیڈ جسم میں پانی یا سیال کو ریگولیٹ کرتا ہے یہی وجہ ہے کہ نمک کا بہت زیادہ استعمال کرنے سے جسم میں پانی کی کمی ہو جاتی ہے،ایک تحقیق کے مطابق بہت زیادہ نمک کا استعمال کرنے سے پیشاب زیادہ آتا ہے، جس کے نتیجے میں جسم میں پانی کی کمی ہوتی ہے اور پیاس زیادہ لگنے لگتی ہے۔
جب آپ زیادہ پیشاب کرتے ہیں تو جسم سے کیلشیئم کا اخراج بھی بڑھ جاتا ہے جو ہڈیوں کے امراض کا باعث بنتا ہے،بہت زیادہ نمک گردوں کو زیادہ پانی جسم میں رکھنے پر مجبور کرتا ہے جو بتدریج گردے فیل ہونے کا باعث بھی بن سکتا ہے،گردوں کی جانب سے پانی کی مقدار بڑھانے کے نتیجے میں ہاتھوں، بازوﺅں اور پیروں میں سوجن یا ورم کا امکان بڑھ جاتا ہے،جو لوگ بہت زیادہ نمک کھاتے ہیں ان میں معدے کے السر کا رجحان زیادہ دیکھنے میں آیا ہے تاہم ماہرین طب اس حوالے سے پریقین نہیں کہ ایسا کیوں ہوتا ہے،جب آپ کی رگوں سے پانی زیادہ گزرتا ہے تو وقت گزرنے کے ساتھ وہ اکڑنے لگتی ہیں اور ہائی بلڈ پریشر کا مرض لاحق ہوجاتا ہے،یہ بتانے کی ضرورت نہیں کہ ہائی بلڈ پریشر کے باعث امراض قلب اور فالج کا خطرہ بھی بڑھ جاتا ہے جو دنیا بھر میں اموات کی بڑی وجوہات میں سے ایک ہیں۔
etemaaddaily



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 April 22