Monday - 2018 Dec 10
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 188756
Published : 31/7/2017 16:45

بیداری اسلامی:

اگر امت بیدار ہو تو استعماری طاقتیں مسلمانوں کا کچھ نہیں بگاڑ سکتیں:رہبر انقلاب

آج ساٹھ سال کا عرصہ گذر رہا ہے کہ خانۂ اسلام، مسلمانوں کا قبلۂ اول جو فلسطین میں ہے وہ اپنوں کے ہاتھوں سے نکل چکا ہے، فلسطینی آوارہ وطن ہیں یا اپنے گھروں میں غاصب کے نرغہ میں ہیں جو بڑی ڈھٹائی سے وہاں بیٹھا ہوا ہے اور دشمنان اسلام بھی اس کی تائید کررہے ہیں،اس بڑی مصیبت اور صدمہ کا سبب مسلمانوں کی اپنی توانائیوں سے غفلت ہے،آج دنیائےاسلام میں جو بیداری موجود ہے اگر۱۹۳۰ اور ۱۹۴۰ عیسوی کی دہائی میں یہ بیداری رونما ہوئی ہوتی تو فلسطین کا قضیہ ہی پیش نہ آتا۔

ولایت پورٹل:ابتدا سے اب تک استعماری طاقتیں کئی صدیوں سے مسلمانوں کو یہ سمجھاتی آرہی ہیں کہ تم سے کوئی کام نہیں ہونے والا،تمہارے اندر ہم سے مقابلہ کرنے کی طاقت نہیں ہے البتہ یہ بات لوگوں کو باور کرانے میں طویل مدت لگ گئی اور بعض سیاسی افراد نے بھی اس خیانت میں تعاون کیا نتیجتاً یہ غلط فہمی بہت بڑی پریشانی کا باعث بن گئی اور ان پریشان کن مسئلوں میں سر فہرست قدس اور فلسطین کا مسئلہ ہے۔
آج ساٹھ سال کا عرصہ گذر رہا ہے کہ خانۂ اسلام، مسلمانوں کا قبلۂ اول جو فلسطین میں ہے وہ اپنوں کے ہاتھوں سے نکل چکا ہے، فلسطینی آوارہ وطن ہیں یا اپنے گھروں میں غاصب کے نرغہ میں ہیں جو بڑی ڈھٹائی سے وہاں بیٹھا ہوا ہے اور دشمنان اسلام بھی اس کی تائید کررہے ہیں،اس بڑی مصیبت اور صدمہ کا سبب مسلمانوں کی اپنی توانائیوں سے غفلت ہے،آج دنیائےاسلام میں جو بیداری موجود ہے اگر۱۹۳۰ اور ۱۹۴۰ عیسوی کی دہائی میں یہ بیداری رونما ہوئی ہوتی تو فلسطین کا قضیہ ہی پیش نہ آتا،اس وقت غاصب انگریز حکومت ایک اسلامی مملکت کو غصب کرکے دوسروں کے ہاتھوں میں دینے کی جرأت ہی نہ کرتی،خیر جو خسارہ ہو چکا ہے بتدریج آج ہم اس کا جبران کرسکتے ہیں،یہ سب منصوبہ بندی کے ذریعہ ممکن ہے لیکن اس کے لئے عقل و تدبیر کے ساتھ ساتھ عزم راسخ کی ضرورت ہے،مضمحل وکمزور ہونے اور سر تسلیم خم کرنے سے دنیائے اسلام اپنے مقاصد نہیں حاصل کرسکتی،دشمن سے خوف کھانے اور عوام کی طاقت پر اعتماد نہ کرنے سے دنیائے اسلام اور امت اسلامی اپنے مقاصد میں کامیاب نہیں ہوسکتی۔

 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 10