Thursday - 2018 August 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 189262
Published : 27/8/2017 16:12

ہے کوئی انسانیت کا پرسان حال:روہنگیا مسلمانوں کی دہائی

میانمار کی ریاست راخین کی ایک خاتون نے عالمی برادری خاص طور پر علام اسلام سے اپیل کی ہے کہ وہ روہنگیا مسلمانوں پر ہونے جاری بربریت کی روک تھام کے لیے کچھ کریں۔


ولایت پورٹل: Arakannaنیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق ایک روہنگیا خاتون نے  ایک ویڈیو جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ میانمار  پولیس کی طرف سے  ہمارے مردوں کے قتل عام  کے خوف سے ہمارے بچے اور عورتیں گھروں میں سہمے رہتے ہیں اور خواتین  پر ہمیشہ  یہ خوف طاری رہتا ہے کہ کب کوئی فوجی ان کی عزت کی پائمالی کرنے پہنچ جائے ،ایک اور ویڈیو منظر عام پر آئی ہے جس میں  مسلمانوں کے ایک پورے گاؤں کو جلاتے ہوئے دکھایا گیا ہے تاہم مرنے اور زخمی ہونے والوں کے بارے میں کوئی خبر نہیں ہے، روہنگیا مسلمانوں نے اسلامی ممالک اور بین الاقوامی امداد رساں اداروں سے درخواست کی ہے کہ انھیں حکومت کے مظالم سے نجات دلائیں  ادھر ان کے پڑوسی ملک بنگلا دیش نے بھی  حفاظتی دستوں کو الرٹ کر رکھا ہے کہ جیسے ہی کوئی روہنگیا پناہ گزین مسلمان  دکھائی دیتا ہے اس کو واپس پلٹا دیا جائے۔
ایکنا


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 August 16