Thursday - 2018 Sep 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 190987
Published : 19/12/2017 14:37

ایک ہزار دن میں آل سعود نے یمنی مسلمانوں کوکیا دیا؟؟!!

سعودی اتحاد کی طرف سے یمن کے خلاف ایک طرفہ جنگ کو شروع ہوئے آج ایک ہزار دن ہوگئے ہیں، آئیے دیکھتے ہیں ان میں آل سعود کے ہاتھوں یمنیوں پر کون سا ظلم نہیں کیا گیا۔


 ولایت پورٹل: تسنیم نیوز ایجنسی کے بین الاقوامی شعبے  نے یمن کے انسانی حقوق اور ترقیاتی کمیشن کا حوالہ دیتے ہوئے ایک رپورٹ پیش کی ہے جس کے تحت کہا گیا ہے  امریکہ اور اسرائیل کے اشاروں پر ناچنے  والی آل سعود  حکومت نے  ایک ہزار دنوں میں  یمن میں  35415 عام شہریوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا ہے یا زخمی کر دیا ہے  ، تفصلی رپورٹ میں آیا ہے کہ اب تک  آل سعود اور امریکی دہشتگردوں کے ہاتھوں 13603عام یمنی شہید جبکہ 21812 افراد زخمی ہوئے ہیں ، شہید ہونےوالوں میں 2887 خواتین اور 2077 بچے شامل ہیں   نیز زخمی ہونے والوں میں 2233 خواتین اور 2722 بچے شامل ہیں   قابل ذکر ہے کہ یہ وہ تعداد ہے جو متعلقہ ادروں کے پاس لکھی ہوئی اور رجسٹرڈ ہے اس کے علاوہ  حملوں سے بچنے کے لیے بیس لاکھ چھ سو پچاس سے زائد افراد گھروں  کو چھوڑ کر بھاگ گئے ہیں ، ان حملوں میں 409356گھر اور 826 مسجدیں ویران ہوئیں ہیں، صرف اتنا ہی نہیں بلکہ 827اسکول اور دیگر تعلیمی ادارے،118 یونیورسیٹیاں  اور ذرائع ابلاغ کےتیس مرکز بھی تباہ ہوئے ہیں اس کے علاوہ چاہیے کو ئی  سرکاری اور غیر سرکاری عمارت ہو یا بنیادی ڈھانچہ، آل سعود  کی بے رحمی اور  بربریت کا منھ بولتاثبوت ہے۔
تسنیم



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Sep 20