Saturday - 2018 july 21
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 191014
Published : 20/12/2017 13:27

کینیا پولیس کا مدرسہ پر حملہ

کینیا کی پولیس نے مومباسا شہر کے جنوب میں واقع ایک مدرسہ پر حملہ کرکے وہاں کے چار اساتذہ اور 100 طلبا کو دہشتگردی کے بہانہ گرفتار کر لیا ہے۔

 ولایت پورٹل:روسیا الیوم کی رپورٹ کے مطابق  کینیا کے   دوسرے بڑے شہر مومباسا کے جنوب میں واقع  ایک اسلامی مدرسہ پر پولیس نے یہ الزام لگاتے ہوئے حملہ کیا کہ یہاں اتنہا پسندی کی تعلیم دی جاتی ہے ،معتبر ذرائع کے مطابق مدرسہ کافی عرصہ سے پولیس  کے زیر نظر تھا جبکہ  مقامی مسلمان آبادی کا  کہنا ہے کہ اس مدرسہ کے غیر قانونی ہونے یا اس میں انتہا پسندی کی تعلیم دیے جانے کے بارے میں پولیس کے پاس کوئی ثبوت نہیں ، مومباسا کے آئمہ جماعت اور واعظین کمیٹی کے سربراہ شیخ حسن عمر نے نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ  ہمارے چار استاتذہ اور 100طلبا گرفتار کر لیے گئے ہیں لیکن ہمیں یہ نہیں معلوم کہ ان کا جرم کیا ہے  تاہم پولیس کا کہنا ہے کہ انھیں مدرسہ کے خلاف کچھ شکایتیں موصول ہوئی ہیں اس لیے پوچھ تاچھ کے لیے طلبا کو گرفتار کیا گیا ہے  اور انھیں جلدی ہی آزاد کر دیا جائے گا، قابل ذکر ہے اس شہر کی کثر آبادی عیسائی ہے لیکن یہاں کسی بھی طرح کا مذہبی تعصب  نہیں ہے۔
ایکنا




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 july 21