Friday - 2018 july 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 193050
Published : 10/4/2018 15:26

رہبر انقلاب کی نظر میں رسول خدا(ص) کی بندگی

حضور(ص) کی بندگی کا یہ عالم تھاکہ جب محراب عبادت کو زینت بخشتے تو مسلسل قیام و قعود کی کثرت سے پائے مبارک پر ورم آجاتا تھا۔ شب کا ایک طولانی حصہ بیداری و عبادت، گریہ و خشیت، راز و نیاز اور دعا و استغفار میں گزرتا تھا۔ ماہ رمضان المبارک کے علاوہ ماہ رجب و شعبان اور سال کے دیگر ایام میں شدید گرمی کے موسم میں بھی آپ (ص) ہر تیسرے دن روزہ رکھتے تھے۔
ولایت پورٹل: حضرت (ص) بغیر زین کے مرکب پر سوار ہوتے تھے۔ جس زمانہ میں لوگ قیمتی گھوڑوں پر مہنگی زین کے ساتھ سوار ہوکر فخر کیا کرتے تھے، آپ (ص) عام طور سے معمولی سواری کا استعمال فرماتے تھے۔ تواضع اور خاکساری آپ (ص) کا خاصہ تھی۔ اپنے ہی ہاتھوں اپنی جوتیاں ٹانکا کرتے تھے۔ یہی شیوہ مکتب محمد (ص)  کے بے بدیل و بے نظیر شاگرد علی بن ابی طالب کا بھی رہا ہے اگرچہ حضور (ص) نے حلال اور جائز طریقہ سے کسب معاش کو سند جواز عطا کرتے ہوئے فرمایا: ''نعم العون علیٰ تقویٰ اللّٰہ الغنا-'' (وسائل الشیعہ، ج12، ص16)  یعنی جھوٹ، فریب اور دھوکہ دہی سے عاری حلال راہوں سے روزی حاصل کرو لیکن خود آپ (ص) کی سیرت یہ تھی کہ موصول شدہ رقم کو فقراء کے درمیان تقسیم کردیتے تھے۔ بندگی کا یہ عالم تھاکہ جب محراب عبادت کو زینت بخشتے تو مسلسل قیام و قعود کی کثرت سے پائے مبارک پر ورم آجاتا تھا۔ شب کا ایک طولانی حصہ بیداری و عبادت، گریہ و خشیت، راز و نیاز اور دعا و استغفار میں گزرتا تھا۔ ماہ رمضان المبارک کے علاوہ ماہ رجب و شعبان اور سال کے دیگر ایام میں شدید گرمی کے موسم میں بھی آپ (ص) ہر تیسرے دن روزہ رکھتے تھے۔
ایک بار آپ (ص) کے اصحاب نے دریافت کیا: ''یا رسول اللہ! آپ (ص) تو کبھی گناہ کے مرتکب نہیں ہوئے پھر یہ دعا و عبادت و استغفار کیوں؟!'' فرمایا:''افلا اکون عبداً شکوراً-'' کیا خدا کی نعمتوں پر اس کا شکر بجا لانا میرا فریضہ نہیں ہے؟!
استقامت و پائیداری اس کمال پر تھی کہ تاریخ انسانیت میں نظیر نہیں ملتی۔ اسی بے مثال استقامت کی بنیاد پر آپ (ص) نے ''لا الہ الا اللہ'' کو استحکام بخشا- یہ کام استقامت کے بغیر ممکن ہی نہ تھا۔ اسی استقامت کے سائے میں آپ (ص) کے بے مثال ناصروں اور مددگاروں نے پرورش پائی، یہی استقامت تھی جس نے عرب کے بے آب و گیاہ صحراء کے درمیان انسانی مدنیت اور بشری اقدار کا خیمہ جاوید نصب کیا۔ فلذالک فادع و استقم کما مرت- (سورہ شوریٰ 15)  

رہبر انقلاب کے خطبہ جمعہ سے اقتباس



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 july 20