Tuesday - 2018 july 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 193128
Published : 14/4/2018 10:13

وہابیت نے اسلام کے خلاف محاذ قائم کر رکھا ہے :خطیب جمعہ تہران

سعودی عرب اور اسرائیل مشترکہ طور پر اسلامی عقائد اور دینی اعتقادات کو ختم کرنے کی مذموم کوشش کررہے ہیں۔
ولایت پورٹل:اسلامی جمہوریہ ایران کے دارالحکومت تہران میں نماز جمعہ آیت اللہ امامی کاشانی کی امامت میں منعقد ہوئی ، جس میں لاکھوں افراد نے شرکت کی،نماز جمعہ کے خطبوں میں خطیب نے عالم اسلام کو تقسیم کرنے کے سلسلے میں سعودی عرب کی گھناؤنی سازشوں اور امریکہ و اسرائیل کے ساتھ اس کے تعاون  کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ سعودی عرب اور اسرائیل مشترکہ طور پر اسلامی عقائد اور دینی اعتقادات کو ختم کرنے کی مذموم کوشش کررہے ہیں،انھوں نے کہا کہ اسلام کے ساتھ آل سعود کی دشمنی اور عداوت پہلے ڈھکی چھپی تھی لیکن اب آشکار اور طشت از بام ہوگئی ہے۔خطیب جمعہ نے برطانیہ کی اسلام کے خلاف سازش کی طرف اشارہ کرتے ہوئے  کہا کہ برطانیہ نے 300 سال قبل اسلام میں فکری انحراف پیدا کرنے کے لئے 10 افراد کو اسلامی ممالک پر مسلط کیا اور اس نے  80 سال قبل سرزمین حجاز میں وہابیت کو تشکیل دیا اور آج وہابیوں کی خیانت بتدریج مسلمانوں کے سامنے نمایاں ہوگئی ہے اور سعودی عرب کے ولیعہد نے اعتراف بھی کیا ہے کہ سعودی عرب نے وہابیت کو امریکہ  کی مرضی  اور حکم کے مطابق دنیا میں پھیلایا  اور آج وہابیت نے اسلام کے خلاف دہشتگردی کا ایک بہت بڑا محاذ قائم کیا ہے جو اسلام کی روح اور تعلیمات کے بالکل خلاف ہے،آیت اللہ امامی کاشانی نے اسلام اور مسلمانوں کے خلاف امریکی ، اسرائیلی اور سعودی مثلث کی طرف اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ آج شام، عراق، فلسطین، یمن، لبنان ، افغانستان ، لیبیا اور دیگر اسلامی ممالک میں مذکورہ تین ممالک مشترکہ طور پر  تباہی اور بربادی پھیلا رہے ہیں،آیت اللہ امامی کاشانی نے عید مبعث حق کی شناخت اور بیداری کی عید قراردیتے ہوئے کہا کہ عید بعثت  اسلام کی عزت ، آبرو اور سربلندی کی عید ہے اور اس عید سعید کے موقع پر ہم تمام مسلمانوں کو مبارکباد پیش کرتے ہیں۔
مہر





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 july 17