Sunday - 2018 july 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 193655
Published : 10/5/2018 6:5

تم ایران کا کچھ نہیں بگاڑ سکتے:رہبر معظم کا امریکی صدر کو انتباہ

رہبر معظم کہنا تھا کہ ٹرمپ نے ایرانی قوم کو للکارا اور دھمکیاں دیں، میں ایرانی قوم کی نیابت میں کہوں گا کہ جناب ٹرمپ! تم ایران کا کچھ نہیں بگاڑ سکوگے۔
ولایت پورٹل:رہبر معظم کے دفتر اطلاعات و نشریات کی رپورٹ کے مطابق رہبر معظم آیت اللہ العظمی سید علی خامنہ ای نے ایٹمی معاہدے سے دستبرداری پر امریکہ کو دو ٹوک الفاظ میں جواب دیدیا ہے،رہبر معظم نے امریکی صدر پرشدید تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ ٹرمپ نے گزشتہ رات ایران کو دھمکیاں دیں ہیں میں ایرانی قوم کی طرف سے کہوںگا تم ایران کا کچھ نہیں بگاڑ سکتے،واضح رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے گزشتہ رات اعلان کیا ہے کہ ان کا ملک 2015 میں ہونے والے ایران جوہری معاہدے سے نکل رہا ہے اور اب ایران کے خلاف دوبارہ سخت پابندیاں عائد کی جائیں گی، رہبر معظم نے امریکی صدر کے بیان پر سخت رد عمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ ٹرمپ نے نہایت گھٹیا زبان استعمال کی اور 10 سے زائد جھوٹ بولے،ان کا کہنا تھا کہ ٹرمپ نے ایرانی قوم کو للکارا اور دھمکیاں دیں، میں ایرانی قوم کی نیابت میں کہوں گا کہ جناب ٹرمپ! تم ایران کا کچھ نہیں بگاڑ سکوگے، رہبر معظم نے مزید کہا کہ میں نے شروع میں کہا تھا کہ مسئلہ جوہری پروگرام کا نہیں بلکہ امریکہ کو اصل مسئلہ اسلامی نظام سے ہے، تو اندرون ملک بعض خواص نے کہا کہ جوہری پروگرام کو ترک کردیں، البتہ یہ بات بالکل غلط تھی، ہمیں جوہری پروگرام کی ضرورت ہے، آئندہ 20 سالوں کے دوران ملک کو 20 ہزار میگاواٹ بجلی کی ضرورت پڑے گی،رہبر معظم نے کہا کہ میں نے روز اول سے کہا ہے کہ امریکا کا ایران سے مسئلہ صرف اور صرف اسلامی نظام کا ہے، نہ کہ جوہری پروگرام، جوہری پروگرام محض ایک بہانہ ہے، لوگوں نے کہا کہ ایسا نہیں ہے، اب سب پر واضح ہوگیا ہے کہ اصل مسئلہ کہاں ہے،انہوں نے کہا کہ ہم نے مذاکرات کئے اور جوہری معاہدہ ہوا لیکن ایران کے ساتھ دشمنی ختم نہیں ہوئی،اگر آج ہم نے میزائل پروگرام کے بارے میں بھی مذاکرات کئے تب بھی ایران دشمنی جاری رہے گی اور ایک نیا بہانہ تراشا جائے گا۔
تسنیم



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 july 22