Monday - 2018 Sep 24
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 194169
Published : 12/6/2018 10:17

بہار رمضان:

ماہ رمضان زمینی باشندوں کی فرشتوں کے ساتھ ہم نشینی کا منفرد موقع ہے: رہبر انقلاب

رمضان المبارک کی مثال بالکل ویسے ہی ہے جیسے خطرات سے بھرے دلدل اور دشوار گذار راہوں میں کبھی کوئی ہموار راستہ یا آرام دہ سواری مل جائے۔

ولایت پورٹل: رمضان المبارک کا مہینہ بہت ہی عظیم اور منفرد موقع ہے کہ خدا کے فضل و کرم سے اس برس بھی ہمیں عنایت ہوا ہے کہ خدا کے بچھائے ہوئے اس دسترخوان پر حاضر ہونے کا شرف حاصل کریں۔پورے سال کے دوران اس منفرد موقع کی نظیر نہیں ملتی ہے۔رمضان کے مہینہ میں ہم ساکنان زمین کے لئے کتنی بڑی سعادت اور خوش نصیبی کا موقع ہے کہ ملائکۃ اللہ اور روح الامین کے ہمنشین قرار پائیں:’’تَنَزَّلُ الْمَلآئِکَۃُ وَالرُّوْحُ فِیْھَابِاِذْنِ رَبِّھِمْ‘‘۔(۱)  
رمضان کی لیلۃ القدر، عرش معلی کے ملائک کے ساتھ زمینی باشندوں کی ہمنشینی کی رات ہے۔جس طرح سے بشری کارواں ایک نہایت اور انجام کی جانب ہمیشہ ہی دائمی حرکت میں سرگرم رہتا ہے، اسی طرح ہر فرد بشر بھی اپنی زندگی میں ایک نہایت و انجام اور منزل مقصود کی جانب رواں دواں ہے:’’اِنَّکَ کَادِحٌ اِلیٰ رَبِّکَ کَدْحاً فَمُلَاقِیْہِ‘‘۔(۲)
یہ طویل مسافت اور راستہ، مختلف اور گوناگوں نشیب و فراز والی پگڈنڈی اور راہوں سے ہوکر گذرتا ہے، اس راہ میں رنج و مصائب و محن، بلاؤں اور آفتوں کے علاوہ گشائش و فرج اور مسرّت و انبساط کی راحتیں بھی ہیں:’’بَلَوْنَاھُمْ بِالْحَسَنَاتِ وَالسَّیِّئَاتِ‘‘۔(۳)
یہ سب کچھ آزمائش ہے۔ اس طویل مسافت والی راہ میں کہ جس کو ہر فرد بشر کو سر کرنا اور اس کے بعد خود کمال انسانی کے مقام یعنی لقاء اللہ تک پہنچانے کی کوشش کرنی ہے، اس کے کچھ مواقع اور منازل کو طے کرنا اور ان پر چلنا بڑی ہی دشوار گذار کام ہے اس کی مثال ایسی ہے جیسے کہ کسی کو معمول کی زندگی میں کبھی ایسی راہ سے گذرنے کا اتفاق ہو جو کہ بہت ہی دشوار گذار اور کٹھن ہو اور ایسی گھاٹی اور وادی سے گذرنا پڑے یا اس کے راستہ میں خطرات سے بھرا دلدل ہو اور یا کبھی ایسا بھی ہوتا ہے کہ دشوار گذار راہوں کے بعد راستہ بھی ہموار اور سواری بھی اچھی اور آرام دہ مل جائے۔
۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔
حوالہ جات:
۱۔سورہ قدر:۴۔
۲۔سورہ انشقاق:۶۔
۳۔سورۂ اعراف:۱۶۸۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Sep 24