Monday - 2018 August 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 194172
Published : 12/6/2018 13:22

ایران کے بڑھتے رسوخ سے خائف اسرائیل و عرب امارات ہوئے متحد:امریکی خفیہ ایجنسی

اس رپورٹ کے رپوٹر نے یہ بھی لکھا ہے کہ امریکہ کی سابق وزیر خرجہ ہیلری کلنٹن یہ بات بخوبی جانتی تھیں کہ سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات ایران کے بڑھتے رسوخ کو روکنے کے لئے اسرائیل خفیہ ایجنسی موساد کے ساتھ تعاون کررہے ہیں۔

ولایت پورٹل: القدس العربی کی رپورٹ کے مطابق امریکہ کی خفیہ ایجنسی نے اسرائیل اور متحدہ عرب امارات کے اعلٰی حکام کی ایک اہم ملاقات کا پردہ فاش کرتے ہوئے کہا ہے کہ اپریل میں عرب امارات کے شہزادے اور اسرائیلی وزیر اعظم بن یامین نتنیاہو نے  جمہوری قبرص کے دارالحکومت نکوسیا میں ایک ملاقات کی تھی جس میں ایران کا ایٹمی معاہدہ اور خطہ میں اس کے بڑھتے رسوخ کو روکنا اس ملاقات کا مقصد تھا۔
اس رپورٹ کے رپوٹر نے یہ بھی لکھا ہے کہ امریکہ کی سابق وزیر خارجہ ہیلری کلنٹن یہ بات بخوبی جانتی تھیں کہ سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات ایران کے بڑھتے رسوخ کو روکنے کے لئے اسرائیل خفیہ ایجنسی موساد کے ساتھ تعاون کررہے ہیں۔
یاد رہے کہ اسلامی جمہوریہ ایران کا پر امن ایٹمی پروگرام عرب و یوروپی ممالک کے خدشات کی وجہ بنا ہوا ہے شاید ان کی نظریں اس بات پر ہیں کہ اگر ایران ایٹمی پاور بن گیا تو خلیجی ممالک کو ایران سے دب کر رہنا ہوگا۔ جبکہ ایران بارہا کہہ چکا ہے کہ ان کا ایٹمی پروگرام ملک میں توانائی کی قلت کو دور کرنے کے لئے ہے۔




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 August 20