Thursday - 2018 Nov 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 194368
Published : 1/7/2018 16:44

افغانستان بیرونی طاقتوں کی زور آزمائی کا اڈہ بن چکا ہے: حامد کرزئی

سابق افغانی صدر نے طالبان اور حکومت کے درمیان بڑھتے تنازعہ پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بیرونی طاقتوں نے افغانستان کو اپنی زور آزمائی کا مرکز بنالیا ہے اور وہ اپنے فائدے کے لئے افغانی عوام کی قربانی لے رہے ہیں۔

ولایت پورٹل: رپورٹ کے مطابق افغانستان کے سابق صدر حامد کرزئی نے ملک کی تازہ صورتحال پر تبصرہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ طالبان اور حکومت کے درمیان تصادم  افغانستان کے عوام کے لئے نہایت خطرناک ہے۔
سابق افغانی صدر نے طالبان اور حکومت کے درمیان بڑھتے تنازعہ پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ بیرونی طاقتوں نے افغانستان کو اپنی زور آزمائی کا مرکز بنالیا ہے اور وہ اپنے فائدے کے لئے افغانی عوام کی قربانی لے رہے ہیں۔
حامد کرزئی نے حکومت کے ساتھ ساتھ طالبان سے یہ مطالبہ کیا ہے کہ وہ بیرونی طاقتوں کی ڈگڈگی پر ناچ کرنا چھوڑ دیں۔
افغانستان کے سابق صدر نے مزید وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ بیرونی طاقتیں ملک میں افراتفری،قتل و غارتگری کے اصل ذمہ دار ہیں اور حکومت کی ذمہ داری بہت زیادہ سنگین ہے کوئی بھی قدم اٹھانے سے پہلے کئی بار سوچنے کی ضرورت ہے۔
یاد رہے کہ افغانستان میں مسلسل کئی بار حامد کرزئی صدر رہے ہیں اب وہ جو مطالبات موجودہ حکومت سے کررہے ہیں یہاں کی عوام کو ان سے بھی یہی توقع تھی اور دوسرے یہ کہ کرزئی نے ہی سب سے پہلے نیٹو کو ملک میں مزید رہنے کی اجازت دی تھی۔





آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Nov 22