Saturday - 2018 Sep 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 194464
Published : 10/7/2018 15:41

بحرین کے محبوب رہنما لندن روانہ،کیا دوبارہ وطن لوٹنا نصیب ہوگا؟

یاد رہے کہ 2 برس پہلے جب شیخ عیسٰی قاسم کو اپنے ہی گھر میں نظر بند کیا گیا تو ان کی شہریت کو منسوخ کردیا گیا تھا اور جب انہیں برطانیہ بھیجا گیا تو سیاسی مبصرین کا ماننا ہے کہ شاید بحرینی عوام کا اپنے محبوب قائد کا یہ آخری دیدار ہو چونکہ شاید انہیں اب اپنے وطن آنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

ولایت پورٹل: رپورٹ کے مطابق بحرین کے مذہبی رہنما 2 برس کی نظربندی کے بعد کل بحرین سے بغرض علاج لندن پہونچ چکے ہیں۔
موصولہ اطلاعات کے مطابق آیت اللہ عیسٰی قاسم کو ائیرپورٹ سے سیدھا ہسپتال لے جایا گیا جہاں اسپیشل ڈاکٹروں کے معائنہ کے بعد انہیں طبی سہولیات مہیا ہونا شروع ہوگئی ہیں۔
نیز یہ بھی اطلاع ہے کہ بحرینی رہنما کو ٹیومر ہے جس کے سبب مجبوراً انہیں لندن جانا پڑا لیکن ابھی یہ موذی مرض اپنے ابتدائی مراحل ہی میں ہے جس کا آپریشن جلد ہوجائے گا۔
لیکن دوسری طرف بحرین کے عمائدین میں یہ بحث تیزی سے چل رہی ہے کہ کہیں ایسا نہ ہو کہ آل خلیفہ کی سفاک حکومت انہیں علاج کے بعد واپس وطن آنے نہ دے ۔چنانچہ آیت اللہ عیسٰی قاسم کے نمائندے شیخ عبد اللہ الدقاق کا کہنا ہے کہ اگر آل خلیفہ نے ہمارے محبوب قائد کے تئیں غلط فکر کو پروان چڑھایا تو اسے اس کی بھاری قیمت چکانا پڑے گی۔
انہوں نے کہا کہ جس وقت شیخ کو بحرین ائیرپورٹ پر لایا گیا ان کے چاہنے والوں کی کثیر تعداد انہیں رخصت کرنے پہونچی ہوئی تھی جس کے سبب بحرینی حکومت نے سیکورٹی کے سخت انتظامات کررکھے تھے۔
یاد رہے کہ 2 برس پہلے جب شیخ عیسٰی قاسم کو اپنے ہی گھر میں نظر بند کیا گیا تو ان کی شہریت کو منسوخ کردیا گیا تھا اور جب انہیں برطانیہ بھیجا گیا تو سیاسی مبصرین کا ماننا ہے کہ شاید بحرینی عوام کا اپنے محبوب قائد کا یہ آخری دیدار ہو چونکہ شاید انہیں اب اپنے وطن آنے کی اجازت نہیں دی جائے گی۔

 


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 Sep 22