Thursday - 2018 Sep 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 194494
Published : 12/7/2018 16:24

شیخ زکزکی کی حالت تشویش ناک،حکومت کا ظلم رکنے کا نام نہیں لے رہا ہے

نائیجریا کی اسلامی تحریک کے ترجمان ابراہیم موسٰی نے بتایا ہے کہ گولی لگنے سے شیخ کی ایک آنکھ نابینا ہوچکی ہے جبکہ دوسری آنکھ میں بھی موتیا نامی بیماری پیدا ہوچکی ہے نیز ان کی بیگم زینت ابراہیم کے جسم میں ابھی بھی کئی گولیاں موجود ہیں اور وہ کھڑے ہونے سے بھی معذور ہیں۔

ولایت پورٹل: رپورٹ کے مطابق نائیجریا کے معتبر ذرائع سے اطلاع موصول ہوئی ہے کہ شیعہ مذہبی رہنما شیخ ابراہیم زکزکی کی طیبعت زیادہ خراب ہے اور حکومت کسی صورت انہیں علاج کروانے کی اجازت نہیں دے رہی ہے۔
نائیجریا کے معروف صحافی یونس ابوبکر کے بقول شیعہ مذہبی رہنما شیخ ابراہیم زکزکی کو پچھلے سال شدید بیماری کا عارضہ ہوا تھا اور عدالت کی طرف سے انہیں بے قصور ثابت کرنے کے باوجود حکومت نے انہیں ابھی تک آزاد نہیں کیا۔
نائیجریا کی اسلامی تحریک کے ترجمان ابراہیم موسٰی نے بتایا ہے کہ گولی لگنے سے شیخ کی ایک آنکھ نابینا ہوچکی ہے جبکہ دوسری آنکھ میں بھی موتیا نامی بیماری پیدا ہوچکی ہے نیز ان کی بیگم زینت ابراہیم کے جسم میں ابھی بھی کئی گولیاں موجود ہیں اور وہ کھڑے ہونے سے بھی معذور ہیں۔
انہوں نے بتایا ہمیں امید ہے کہ ایک دن شیخ آزاد ہونگے اور ظالم حکومت کو منھ کی کھانا پڑے گی۔








آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Thursday - 2018 Sep 20