Sunday - 2018 Dec 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 195090
Published : 23/8/2018 16:23

کسی کی شخصیت کو پرکھنے کا معیار فقط نماز نہیں:شہید مطہری(رح)

کبھی بھی کسی کے طولانی رکوع و سجود کو مت دیکھئیے اور انہیں اس کی شخصیت کا معیار قرار نہ دیجیئے ہوسکتا ہے کہ طولانی رکوع و سجود کی آڑ میں آپ کو اس کی حقیقی اور واقعی شخصیت دکھائی نہ دے رہی ہو اور اس کے یہ طولانی رکوع اور سجود کہیں آپ کو دھوکہ نہ دے رہے ہوں۔

ولایت پورٹل: قارئین کرام شهید اسلام مفکر بے نظیر شہید مرتضٰی مطہری(رح) نقل کرتے ہیں کہ:اگر ہم سود کھاتے ہیں اور نماز کو تمام نوافل اور مستحبات کیساتھ بھی پڑھتے ہیں، اگر ہم لوگوں کی امانت میں خيانت کرتے ہیں اور ہم زیارت عاشورا کو بھی ترک نہیں کرتے ہیں۔
پس ہمیں سمجھنا چاہیے کہ یہ عبادتیں نہیں ہیں بلکہ عادتیں ہیں چنانچہ حضرت امام صادق علیہ السلام فرماتے ہیں:’’لاتَنْظُروا الي طولِ رُکوعِ الرَّجُلِ وَ سُجودِهِ ‘‘۔
کبھی بھی کسی کے طولانی رکوع و سجود کو مت دیکھئیے اور انہیں اس کی شخصیت کا معیار قرار نہ دیجیئے ہوسکتا ہے کہ طولانی رکوع و سجود کی آڑ میں آپ کو اس کی حقیقی اور واقعی شخصیت دکھائی نہ دے رہی ہو اور اس کے یہ طولانی رکوع اور سجود کہیں آپ کو دھوکہ نہ دے رہے ہوں۔
ممکن ہے یہ عادات ہوں، اگر آپ سمجھنا چاہتے ہیں یہ آدمی کس طرح کا ہے تو اس کی سچائی کو دیکھیں اور امانتداری کو دیکھیں کہ کہیں یہ خیانت تو نہیں کرتا۔
کیونکہ جو سچے اور امين ہوتے ہیں انکی ایسی عادات نہیں ہوتیں بلکہ وہ عمل کرکے دیکھاتے ہیں۔

شہید مطہری(رح) کی کتاب اسلام و ضرورتیں جلد ۱ صفحه ۲۱۱ سے اقتباس



آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 Dec 16