Friday - 2019 January 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 195503
Published : 29/9/2018 5:38

تہران میں عالمی سامراجی طاقتوں کے خلاف مظاہرہ

تہران کی عوام نے نماز جمہ کے بعد مظاہرے کر کے سانحہ اہواز میں ملوث عالمی سامراجی طاقتوں اور ان کے پالے دہشت گردوں کے وحشیانہ اقدام کی شدید مذمت کی۔
ولایت پورٹل:تہران کے شہریوں نے نماز جمعہ کے اختتام پر شہر کے مرکزی علاقے کی سڑکوں پر مارچ کیا اور گزشتہ ہفتے اہواز میں پیش آنے والے دہشت گردی کے سانحے اور اس میں ملوث عالمی طاقتوں کے خلاف نعرے لگائے، قابل ذکر ہے کہ بائیس ستمبر کو جنوب مغربی ایران کے شہر اہواز میں دہشت گردوں کے ایک گروپ نے مسلح افواج کی پریڈ دیکھنے والے عام شہریوں پر فائرنگ کر دی تھی جس میں چوبیس افراد شہید اور ساٹھ دیگر زخمی ہو گئے تھے، سعودی عرب کی سرپرستی میں قائم دہشت گرد گروہ داعش اور الاحوازیہ، دونوں نے دہشت گردی کے اس واقعے کی ذمہ داری قبول کی تھی،اس سے پہلے تہران کے خطیب جمعہ آیت اللہ موحدی کرمانی نے نماز جمعہ کے خطبوں میں کہا تھا کہ اس طرح کا مجرمانہ اقدام دشمنوں اور دہشت گردوں کی بے بسی کو نمایاں کرتا ہے،ایران کی سپاہ پاسداران انقلاب اسلامی کے ڈپٹی کمانڈر بریگیڈیئر جنرل حسین سلامی نے بھی نماز جمعہ کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اہواز کے سانحے کی اصل منصوبہ بندی میں امریکہ، اسرائیل، سعودی عرب اور متحدہ عرب امارات شامل رہے ہیں،انہوں نے واضح کیا تھا کہ ایران کے ساتھ کشیدگی سے کسی کو کچھ ہاتھ نہیں آئے گا۔ 
سحر




آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2019 January 18