يکشنبه - 2019 مارس 24
ہندستان میں نمائندہ ولی فقیہ کا دفتر
Languages
Delicious facebook RSS ارسال به دوستان نسخه چاپی  ذخیره خروجی XML خروجی متنی خروجی PDF
کد خبر : 72063
تاریخ انتشار : 1/4/2015 19:39
تعداد بازدید : 22

بحرین: یمن کی حمایت، سرگرم شخصیات کی گرفتاری

حرین کی آل خلیفہ حکومت نے الوحدوی سمیت متعدد اہم سیاسی شخصیات کو گرفتار لیا ہے-
العالم ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق بحرینی حکومت نے جمعیت الوحدوی کے سربراہ فاضل عباس اور ان کے مشیر محمد المطوع کو گرفتار کرلیا ہے۔ بحرین کی حکومت نے بہانہ بنایا ہے کہ ان شخصیات نے سعودی عرب کے جارحانہ حملے میں یمنی عوام کی حمایت کی ہے۔ چودہ فروری کے اتحاد نے آل خلفیہ حکومت کے اس اقدام کی مذمت کی ہے اور ایک بیان جاری کرکے ان گرفتاریوں کو عالمی معاہدوں کے منافی قرار دیا ہے۔ انہوں نے ان اقدامات کا مقصد، آل خلیفہ حکومت کے خلاف حریت پسندانہ آواز کو دبانا قرار دیا ہے۔ اس اتحاد نے اس بات پر زور دیا ہے کہ بحرینی قوم، یمنی عوام کی حمایت جاری رکھے گی۔ اس بیان میں کہا گیا ہے کہ اس قسم کے مسا‏ئل میں آل خلیفہ حکومت کی بے جا مداخلت کارگر ثابت نہیں ہوگی۔ اس بیان میں آل خلیفہ کو سعودی حکام کا پٹھو قرار دیا گیاہے۔ قابل ذکر ہے کہ آل خلیفہ حکومت کی تبدیلی کے تمام نعروں اور مطالبات کے باوجود، بحرینی پولیس اور سیکورٹی اہلکار، انسانی حقوق کی خلاف ورزی کر رہے ہیں۔ بحرینی حکومت نے مخالفین پر دباؤ ڈالنے کی غرض سے، سن دو ہزار سات سے اپنے مخالفین پر تشدد اور جارحانہ کاروائیوں کا سلسلہ شروع کر رکھاہے۔ اس کے علاوہ آل خلیفہ حکومت کی نام نہاد فوجی عدالت نے بحرین کی انسانی حقوق کی تنظیم کے سربراہ عبدالہادی خواجہ جیسی شخصیات کو عمر قید کی سزا سنائی ہے۔


نظر شما



نمایش غیر عمومی
تصویر امنیتی :