سه شنبه - 2019 مارس 19
ہندستان میں نمائندہ ولی فقیہ کا دفتر
Languages
Delicious facebook RSS ارسال به دوستان نسخه چاپی  ذخیره خروجی XML خروجی متنی خروجی PDF
کد خبر : 72093
تاریخ انتشار : 2/4/2015 22:21
تعداد بازدید : 13

مصر میں اخوان المسلمین کے رہنماؤں اور کارکنوں کو فوجی عدالت کے حوالے کردیا گیا

مصر کے صوبے بنی سویف کے اٹارنی جنرل نے اخوان المسلمین کے سینئر رہنما محمد بدیع اور، دو سو، تئیس، کارکنوں کو فوجی عدالت کے حوالے کردیا-
اخوان المسلمین کے اس سینئر رہنما اور دو سو تئیس کارکنوں پر، اگست دوہزار تیرہ میں سرکاری اموال کی توڑ پھوڑ کا الزام ہے- تسنیم نیوز کی رپورٹ کے مطابق مصر کے ایک عدالتی عہدیدار نے، نام نہ بتائےجانے کی شرط پر کہا ہے کہ بنی سویف کے اٹارنی جنرل تامر الخطیب نے، محمد البدیع اور دو سو تئیس افراد کو، جو اخوان المسلمین کے کارکن اور سابق صدر محمد مرسی کے حامی ہیں سرکاری اموال تباہ کرنے کے الزام میں فوجی عدالت کے حوالے کردیا ہے- اس سے قبل بھی اخوان المسلمین کے چار افراد کو سوئز، شمالی سینا اور اسماعیلیہ کے علاقوں میں ہونے والے، تشدد کے واقعات کا ذمہ دار قرار دے کر، فوجی عدالت کے حوالے کردیا گیا تھا- مصر کے صدر عبدالفتاح سیسی نے گذشتہ اکتوبر میں ایک آرڈینینس جاری کیا تھا جس کی رو سے سرکاری اور غیر سرکاری اموال کو نقصان پہنچانا، جرم شمار ہوتا ہے- ادھر انسانی حقوق کی مصری اور عالمی تنظیموں نے مصر میں فوجی عدالتوں میں عام شہریوں کے مقدموں کی سماعت پر گہری تشویش کا اظہار کیا ہے-


نظر شما



نمایش غیر عمومی
تصویر امنیتی :