Tuesday - 2018 Oct. 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 72437
Published : 7/4/2015 13:12

یمن پر سعودی حملوں کے غیر قانونی ہونے پر لاوروف کی تاکید

روس کے وزیرخارجہ نے یمن پر حملے سے قبل سعودی عرب کے زیر قیادت اتحاد کی جانب سے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل سے صلاح و مشورہ نہ کئے جانے پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے اس بحران کے حل کے لئے مذاکرات کی ضرور ت پر زور دیا ہے- پریس ٹی وی کی رپورٹ کے مطابق روس کے وزیرخارجہ لاوروف نے ایک انٹرویو میں کہا ہے کہ اس وقت ان کاروائیوں کی بین الاقوامی قوانین میں کوئی جگہ نہیں ہے- البتہ چونکہ یہ کاروائیاں بغیر کسی صلاح و مشورے کے انجام پائی ہیں اس لئے ہمیں افسوس ہے- روس کے وزیرخارجہ نے کہا کہ یمن کے بحران میں فریق مقابل کو مذاکرات کی میز پر آنا چاہئے۔ روس نے، کہ جو اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کا مستقل رکن ملک ہے، یمن کے لئے انسانی ہمدردی پر مبنی امداد بھیجنے کے لئے سعودی حملے روکے جانے کا مطالبہ کیا تھا جس کی سعودی عرب اور بعض مغربی ممالک نے مخالفت کی ہے- آل سعود حکومت نے یمن کے سابق مفرور صدر منصور ہادی کو اقتدار میں دوبارہ واپس لانے کے لئے چھبّیس مارچ سے اس ملک پر فوجی یلغار شروع کر رکھی ہے- منصور ہادی نے جنوری کے مہینے میں اقتدار سے علیحدگی اختیار کر لی تھی اور انھوں نے استعفے پر نظرثانی پر مبنی عوامی انقلابی تحریک انصاراللہ کی درخواست بھی مسترد کردی تھی-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Oct. 16