Wed - 2018 June 20
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 72526
Published : 8/4/2015 13:17

عراق، علامہ محمد بحرالعلوم انتقال کر گئے

عراق کے ممتاز عالم دین علامہ محمد بحرالعلوم انتقال کر گئے- الفرات ٹی وی چینل کی رپورٹ کے مطابق مجاہد اور مفکر عالم دین علامہ سید محمد بحرالعلوم نجف اشرف شہر میں کئی روز کوما کی حالت میں رہنے کے بعد منگل کے روز اپنے خالق حقیقی سے جا ملے-
علامہ محمد بحرالعلوم انیس سو ستائیس میں نجف اشرف کے ممتاز مذہبی، سماجی اور سیاسی گھرانے میں پیدا ہوئے کہ جس نے انیس سو اکیس میں نئے عراق کی تشکیل کے وقت سے اہم کردار ادا کیا- علامہ بحرالعلوم کا شمار عراق کے ممتاز سیاستدانوں میں ہوتا تھا- انھوں نے تاریخ، فقہ اور سیاست کے موضوعات پر پچاس سے زائد کتابیں تحریر کیں- وہ عراق کی اہم اسلامی و سیاسی شخصیات میں شمار ہوتے تھے کہ جن کے سیاسی جماعتوں کے ساتھ وسییع تعلقات تھے اور ان کے موقف اور نظریات کی بنا پر سب ان کا احترام کرتے تھے- دو ہزار تین، چار اور پانچ میں عراق کے وزیر پٹرولیم ابراہیم محمد بحرالعلوم اور دو ہزار دس سے کویت میں عراق کے سفیر محمد حسین محمد بحرالعلوم کے والد ہیں- علامہ بحرالعلوم کا شمار ڈکٹیٹر صدام کی حکومت کے مخالفین میں ہوتا تھا کہ جس کی بنا پر انیس سو انہتر میں ان کی غیرموجودگی میں مقدمہ چلایا گیا اور انھیں پھانسی کی سزا سنائی گئی- صدام حکومت کے خاتمے کے بعد انھیں دو ہزار تین میں عبوری حکومت کی کونسل کا سربراہ منتخب کیا گیا اور انھیں امریکی قبضے کے خاتمے کے بعد عراق کے پہلے عبوری صدر کا خطاب دیا گیا- وہ اکتیس جولائی سے یکم اگست دو ہزار تین تک عبوری کونسل کے سربراہ رہے اور یکم مارچ سے اپریل دو ہزار چار تک دوبارہ عراق کی عبوری کونسل کے سربراہ بنے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 June 20