Monday - 2018 June 25
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 72586
Published : 9/4/2015 21:24

پاکستان کے وزیراعظم سے ایران کے وزیرخارجہ کی ملاقات

پاکستان کے وزیراعظم نے بحران یمن کے حل کے لئے مذاکرات کے ذریعے ایک سیاسی راہ حل تک پہنچنے پر تاکید کی ہے-
موصولہ رپورٹ کے مطابق پاکستان کے وزیراعظم محمد نواز شریف نے جمعرات کو ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف سے ملاقات میں ایران کے آٹھ بارڈر سیکورٹی اہلکاروں کی شہادت کے واقعے پر تعزیت پیش کرتے ہوئے مستقبل میں اس طرح کے واقعات کو روکنے کے لئے مناسب طریقہ کار پیدا ہونے کی امید ظاہر کی- پاکستان کے وزیراعظم نے گروپ پانچ جمع ایک کے ساتھ ایٹمی مذارکرات کے عمل میں حالیہ کامیابی کی مبارکباد دیتے ہوئے مزید کہا کہ حکومت پاکستان، اسلامی جمہوریہ ایران کے ساتھ تمام میدانوں میں تعلقات کو فروغ دینے کے لئے پرعزم ہے- اس موقع پر اسلامی جمہوریہ کے وزیرخارجہ نے بھی یمن کے حالات کے بارے میں کہا کہ یمنی گروہوں کے درمیان گفتگو اور وسیع البنیاد حکومت کی تشکیل، اس ملک میں بحران کے حل کا واحد راستہ ہے جو حقیقت پسندی کی بنیاد پر معین ہونا چاہئے- جواد ظریف نے فوری جنگ بندی، امداد رسانی بالخصوص خوراک، اور دواؤں کی فراہمی اور زخمیوں کے علاج معالجے کو بحران یمن کا راہ حل قرار دیا اور کہا کہ تہران گفتگو اور مذاکرات پر مبنی سفارتی راہ حل کی حمایت کرتا ہے - ایران کے وزیر خارجہ نے داعش ، دہشتگردی اور انہتا پسندی کو تہران اور اسلام آباد کی مشترکہ تشویش قرار دیا اور کہا کہ سیکورٹی میدان بالخصوص سرحدوں پر ایران اور پاکستان کے درمیان سیکورٹی تعاون بڑھنا چاہئے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 June 25