Wed - 2018 Dec 12
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 74488
Published : 12/5/2015 20:15

بارزانی اور اثیل النجیفی کا دورہ امریکہ، خطرے کی گھنٹی

عراق کے رکن پارلیمنٹ زاہر العبادی نے کہا ہے کہ بارزانی اور اثیل النجیفی کا دورہ امریکہ عراق کی تقسیم کے لئے امریکی گانگریس کے منصوبے پر عمل درآمد کا آغاز ہے- عراقی رکن پارلیمنٹ زاہر العبادی نے کہا کہ عراقی سیاستدانوں کی نمائندگی میں صوبہ نینوا کے گورنر کے دورہ واشنگٹن باعث ننگ ہے کیونکہ وہ سقوط موصل کے ذمہ دار ہیں- عراقی پارلیمنٹ کے رکن نے کہا کہ موصل کے سقوط میں صوبہ نینوا کے گورنر" اثیل النجیفی" کا ہاتھ ہے اور انھیں عدلیہ کے حوالے کرنا چاہئے تھا لیکن انھیں عراقی سیاستدانوں، حکومت اور عراقی اہلسنت کی نمائندگی میں امریکہ اور تقسیم عراق کے حامی دوسرے ملکوں کے دورے کی اجازت دی جاتی ہے جو باعث ننگ ہے- العبادی نے مزید کہا کہ عراقی کردستان کے سربراہ مسعود بارزانی نے امریکہ میں ایسا بیان دیا ہے جس پر ان سے باز پرس ہونی چاہئے۔ ان کا کہنا تھا کہ مسعود بارزانی اور اثیل النجیفی کا دورہ امریکہ، عراق کی تقسیم کے لئے امریکی کانگریس کے منصوبے پر عمل درآمد کا آغاز ہے جو اس سلسلے میں عراقی پارلیمنٹ کے موقف سے تضاد رکھتا ہے- زاہرالعبادی نے عراقی پارلیمنٹ سے کہا کہ وہ اس بات کا نوٹس لے اور امریکہ کے ساتھ ہر طرح کے براہ راست تعاون کی صورت میں مسعود بارزانی اور اثیل النجیفی سے باز پرس کی جائے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 Dec 12