Wed - 2018 August 15
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 74492
Published : 12/5/2015 20:23

سعودی عرب کے خلاف یمنی قبائل کی زمینی جنگ

یمنی قبائل نے نہتے عوام کے خون کا بدلہ لینے کے لئے سعودی عرب کے خلاف زمینی جنگ شروع کر دی ہے۔ نباء نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق یمنی قبائل نے سعودی عرب کے فوجیوں کے جدید ترین ہتھیاروں کا عام اور سادہ اسلحوں سے مقابلہ کر کے سعودی عرب کے سرحدی علاقے کے چار اڈوں اور ایک مرکز پر قبضہ کرلیا ہے جس کی وجہ سے سعودی عرب کے فوجی کمانڈرز بھی حیران رہ گئے ہیں۔ فوجی ماہرین کا کہنا ہے کہ یمن دشوارگذار علاقوں کے باعث ہزاروں سعودی فوجیوں اور دوسرے ممالک سے کرائے پر لئے گئے فوجیوں کی شکارگاہ بن جائے گا کیونکہ انھیں یمن کی تجربہ کار فوج کا سامنا کرنا ہوگا- سعودی عرب کی جانب سے سینگال کے اکیس سو فوجیوں کو کرائے پر حاصل کرنے سے پتہ چلتا ہے کہ سعودی فوجی یمن میں زمینی جنگ سے اپنی ناتوانی کے باعث کس حد تک خوفزدہ اور پریشان ہیں کیونکہ یمنی قبائل کے جوانوں نے، سعودی عرب کے جازان علاقے میں کمین لگا کر دس سعودی فوجیوں اور ایک اعلی فوجی افسر کو ہلاک کردیا ہے- دوسری جانب رپورٹیں ملی ہیں کہ جنگ یمن کے آغاز سے اب تک یعنی چالیس دنوں کے دوران ہزاروں سعودی فوجی فرار کر گئے ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Wed - 2018 August 15