Tuesday - 2018 july 17
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 75002
Published : 22/5/2015 20:50

جبتک تمام امور شفاف نہ ہوں معاہدہ نہیں ہوسکتا

اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کی ترجمان مرضیہ افخم نے کہا ہے کہ جب تک ایران کے مد نظر تمام امور واضح نہیں ہوں گے کوئی بھی معاہدہ نہیں ہوسکتا۔

اطلاعات کے مطابق وزارت خارجہ کی ترجمان مرضیہ افخم نے امریکی وزارت خارجہ کی ترجمان کے اس بیان کے جواب میں کہ اگر امریکہ کو ایران کی ایٹمی سرگرمیوں تک دسترس کے لئے ضروری ضمانت حاصل نہ ہوئی تو وہ معاہدے پر دستخط نہیں کرے گا کہا کہ جب تک اسلامی جمہوریہ ایران کے مد نظر تمام امور واضح اور نتیجہ بخش نہیں ہوں گے کوئی معاہدہ نہیں ہوسکتا۔ مرضیہ افخم نے کہا کہ ایران نے مذاکرات کے شروع سے ہی تمام امور میں اپنے مواقف واضح اور شفاف طور پر پیش کئے ہیں۔ امریکی وزارت خارجہ کی ترجمان میری ہارف نے ایران کے ساتھ ایٹمی مذاکرات کے بارے میں دعوی کیا ہے کہ تمام مقامات اور افراد تک آئی اے ای اے کی ضروری دسترس کے لئے بدستور مذاکرات جاری ہیں۔ ایٹمی سائنس دانوں اور ایٹمی مراکز تک اغیار کی دسترس کی مکمل ممانعت پر مبنی رہبر انقلاب اسلامی کے بدھ کے خطاب سے متعلق ایک سوال کے جواب میں میری ہارف نے کہا کہ جیسا کہ ہم پہلے کہہ چکے ہیں اعلانیہ مذاکرات کا ہمارا ارادہ نہیں ہے۔ امریکی وزارت خارجہ کی ترجمان نے دعوی کیا کہ ہم نے اور ایران نے فوجی مراکز کے امکانی معائنے کے عمل کا جائزہ لینے پر اتقاق کیا ہے- اسلامی جمہوریہ ایران کے اعلی مذاکرات کار بارہا اس بات کی وضاحت کرچکے ہیں کہ ایران این پی ٹی کے اضافی پروٹوکول نیز عالمی سطح پر آئی اے ای اے کے طریقہ کار سے ہٹ کر کسی کو بھی اپنے فوجی یا غیر فوجی مراکز کے معائنے کی ہرگز اجازت نہیں دے گا-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 july 17