Sunday - 2018 Sep 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 75697
Published : 31/5/2015 20:35

علاقے کی بدامنی عالمی طاقتوں کی سازش ہے

اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا ہے کہ تکفیری اور دہشت گرد گروہ ایران کی سرحدوں کے قریب بدامنی پھیلانے کی توانائی نہیں رکھتے۔ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری علی شمخانی نے ایران کے ٹیلی ویژن چینل سے گفتگو میں کہا کہ علاقے میں پائی جانے والی انتہا پسندی سامراجی طاقتوں، صہیونیزم اور رجعت پسند طاقتوں کی سازش کا نتیجہ ہے۔ اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا کہ انتہا پسند اور دہشت گرد گروہوں کو عالم اسلام اور استقامتی محاذ کو نابود یا کمزور کرنے اور شیعہ و سنی مسلمانوں کے درمیان اختلاف پیدا کرنے کے لئے قائم کیا گیا ہے۔ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا کہ دہشت گرد گروہوں نے ایران کی سرحدوں کے قریب بدامنی پھیلانے کی کوشش کی لیکن ایران کی مسلح افواج کی ہوشیاری اور مکمل آمادگی کی وجہ سے یہ گروہ ایسا نہ کرسکے۔ علی شمخانی نے یمن پرسعودی عرب کی جارحیت کا ذکرکرتے ہوئے کہا کہ تمام ترمشکلات کے باوجود آج یمن کے انقلابی گروہ فوج کے شانہ بشانہ پورے ملک کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لئے ہوئے ہیں لیکن دوسری طرف سعودی عرب یمنی عوام کا قتل عام کرنے کے بعد بھی اپنے آپ کو بے بس محسوس کررہا ہے اور اس کے تئیں یمن اور علاقے کی اقوام کی نفرتوں میں اضافہ ہوتا جارہا ہے۔ انہوں نے تکفیری گروہوں کو علاقے میں سامراجی طاقتوں اور صہیونیزم کے مفادات کا محافظ بتا یا اور کہا کہ یہ گروہ اپنے دعوؤں کے برخلاف نہ صرف یہ کہ غاصب صہیونیوں کے دشمن نہیں ہیں بلکہ امت مسلمہ کے مفادات کو نقصان پہنچانے کےلئےغاصب صیہونی حکومت کےوسائل سے استفادہ کررہے ہیں۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 Sep 23