Monday - 2018 Sep 24
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 75766
Published : 1/6/2015 21:48

عراق: فوج داعش کے ہیڈ کوارٹرمیں داخل ہوگئے

عراق کے رضا کار جوانوں نے شہر بیجی میں نورہ محل کا کنٹرول حاصل کرلیا ہے- یہ محل داعش کا آپریشنل ہیڈ کوارٹر تھا- عراق میں عوامی رضاکار فورسز کے ایک ذریعے نے ارنا سے گفتگو میں کہا ہے کہ حرکت النجباء نامی عوامی فور‎س پیر کے روز کئی گھنٹوں کی جھڑپوں کے بعد بیجی شہر میں داخل ہوگئی اور اس نے نورہ محل کا کنٹرول بھی حاصل کرلیا- واضح رہے کہ نورہ محل، سابق خونخوار ڈکٹیٹر صدام کا محل تھا- اس محل پر داعش نے قبضہ کرنے کے بعد اسے گذشتہ برس سے صوبہ صلاح الدین کا ہیڈ کوارٹر بنا رکھا تھا- داعش نے گذشتہ برس موصل پر بھی قبضہ کیا تھا- بیجی شہر کا مکمل کنٹرول حاصل کرنے کے لئے عراق کی عوامی رضاکار فورسز اور داعش کے درمیان شدید چھڑپیں جاری ہیں- عراقی عوامی فوج کے اس ذریعے نے کہا ہے کہ شہر بیجی کے مضافات میں واقع البوجواری کے علاقے کو آزاد کرالیا گیا ہے اور اس علاقے سے دہشت گردوں کا صفایا کرنے کی کاروائیاں جاری ہیں- اس رپورٹ کے مطابق البوجواری میں داعش تکفیریوں کی دسیوں لاشیں پڑی ہوئی ہیں۔ اس علاقے میں عوامی فورسز کو ہتھیاروں کا ایک گودام بھی ملا ہے- اس گودام سے مختلف طرح کے ہلکے اور خودکار ہتھیار نیز مشین گنیں برآمد ہوئی ہیں- اس کارروائی میں داعش کا ایک سرغنہ دہشت گرد گرفتار بھی کرلیا گیا- خبر ملنے تک صوبہ صلاح الدین کے شمالی علاقوں اور بیجی شہر میں تکفیری دہشت گردوں اور عوامی فورسز کے درمیان جھڑپیں جاری تھیں- واضح رہے کہ عراق کی رضا کار فورسز اور داعش کے درمیان دو بدو جنگ ہو رہی ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Sep 24