Tuesday - 2018 Oct. 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 77337
Published : 21/6/2015 9:35

اسرائیل کا نام بلیک لسٹ سے خارج، سلامتی کونسل پرتنقید

اقوام متحدہ میں فلسطین کے مستقل نمائںدے نے اسرائیل کا نام بلیک لسٹ سے خارج کرنے کی بنا پر سلامتی کونسل کو تنقید کا نشانہ بنایا ہے- اقوام متحدہ میں فلسطین کے مستقل نمائںدے ریاض منصور نے سنہ دو ہزار پندرہ میں اسرائیل کا نام بلیک لسٹ سے نکالنے کی بنا پر سلامتی کونسل پر شدید تنقید کی ہے- اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں تقریر کے دوران ریاض منصور نے فلسطینی بچوں پر مظالم ڈھانے کے باعث صیہونی حکومت کے خلاف مقدمہ چلائے جانے کا مطالبہ بھی کیا- ریاض منصور نے کہا کہ صیہونی حکومت کا نام بلیک لسٹ سے خارج کئے جانے کے بعد اس حکومت پر مقدمہ نہیں چلایا جا سکتا- ریاض منصور نے مزید کہا کہ اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو چاہئے کہ وہ اسرائیل کو قانون کے منافی اقدامات سے روکے- واضح رہے کہ بلیک لسٹ میں ایسے دہشت گرد گروہوں، ممالک اور حکومتوں کے نام شامل ہیں جو بچوں کے حقوق کی خلاف کرتی ہیں- اعداد و شمار کے مطابق صیہونی حکومت نے صرف سنہ دو ہزار چودہ میں غزہ پر جارحیت کے دوران تقریبا پانچ سو چالیس فلسطینی بچوں کو شہید کر دیا تھا جن میں سے تین سو اکہتّر بچّوں کی عمریں بارہ برس سے بھی کم تھیں-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Oct. 16