Friday - 2018 Nov 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 77859
Published : 2/7/2015 11:19

عراق میں داعش کے جارحانہ اقدامات جاری

عراق کے شمالی صوبے نینوا کے مرکز موصل میں داعش دہشت گردوں نے پندرہ شہریوں کو موت کے گھاٹ اتار دیا- ارنا کی رپورٹ کے مطابق شمالی عراق کے صوبے نینوا کے مرکز موصل سے موصولہ رپورٹ کے مطابق تکفیری اور دہشت گرد گروہ داعش نے اس گروہ کے ساتھ تعاون نہ کرنے کےجرم میں الجبوری قبیلے کے پندرہ افراد کو قتل کر دیا- ان افراد کا تعلق موصل کے القیارہ علاقے سے تھا- داعش گروہ نے ان افراد سے اس گروہ میں شامل ہونے کو کہا تھا لیکن انہوں نے اس میں شامل ہونے سے انکار کر دیا تھا- الجبوری قبیلہ صوبہ موصل کا ایک بڑا قبیلہ شمار ہوتا ہے- داعش تکفیریوں نے ان کی لاشیں ان کے اہل خانہ کے حوالے کرنے کے بعد ان کو تدفین کی اجازت نہیں دی- داعش دہشت گردوں کی بربریت کے پیش نظر عراق کے ایک مرجع تقلید آیۃ اللہ بشیر نجفی نے تکفیری گروہوں کے ساتھ جہاد کی ضرورت پر تاکید کی ہے- دوسری جانب خبر ہے کہ صوبہ صلاح الدین کے شہر تکریت کے باشندے اپنے گھروں کی جانب لوٹ رہے ہیں - واضح رہے کہ عراقی فوج اور عوامی فورس نے داعش دہشت گردوں کو اس شہر سے باہر نکالنے کے بعد اس شہر کے باشندوں کی واپسی کے لئے حالات فراہم کر دیئے ہیں- عراق کے نائب صدر نوری مالکی نے کہا کہ علاقے کے تمام بحرانوں میں سعودی عرب کے ملوث ہونے کے آثار نمایاں ہیں-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Nov 16