Monday - 2018 Dec 10
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 77864
Published : 2/7/2015 11:32

داعش کے خلاف کمانڈو دستوں کی تشکیل، افغانستان

افغانستان کے قومی سلامتی کے ادارے نے داعش سے مقابلے کے لئے خصوصی دستوں کی تشکیل کا اعلان کیا ہے۔ افغانستان کے قومی سلامتی کے ادارے کے ترجمان حسیب صدیقی نے نامہ نگاروں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ کابل حکومت کا یہ اقدام داعش کے دہشت گرد عناصر کا مقابلہ کرنے کے لئے کیا گیا ہے۔ حسیب صدیقی نے کہا کہ اس کمانڈو دستے نے ہلمند صوبے سے اپنی کاروائیوں کا آغاز کردیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس دستے کی پہلی کاروائی میں داعش کا مقامی سرغنہ ملا عبدالرئوف خادم ہلاک ہوگیا ہے۔ افغانستان کے قومی سلامتی کے ادارے کے ترجمان نے کہا کہ داعش دہشت گرد گروہ، افغانستان کے ننگرہار اور فراہ صوبوں میں اپنی سرگرمیاں انجام دے رہے ہیں تاہم یہ خصوصی دستہ ہرجگہ ان دہشت گردوں کے ٹھکانوں کو نشانہ بنائے گا۔ انہوں نے بتایا کہ کچھ عرصے قبل افغان سیکورٹی اہلکاروں نے اچین شہر میں موجود داعش کے چھے دہشت گرد ارکان کو گرفتار کرلیا تھا۔ گرفتار شدہ ایک دہشت گرد، اس سے قبل طالبان کا ایک سینیئر رکن تھا۔ حسیب صدیقی نے بتایا کہ منگل کے روز قومی سلامتی کے ادارے کے کمانڈو دستوں نے پکتیکا صوبے میں چودہ غیرملکی دہشت گردوں کو ہلاک کردیا۔ افغانستان نے داعش دہشت گرد گروہ کو قومی سلامتی کے لئے انتہائی خطرناک قرار دیا ہے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Dec 10