Tuesday - 2018 Nov 13
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 77964
Published : 4/7/2015 19:25

سعودی جارحیت: گیارہ ہزار سے زیادہ شہید اور زخمی

یمن پر جاری سعودی جارحیت کے سو دنوں میں گیارہ ہزار سے زیادہ شہری شہید اور زخمی ہو ئے ہیں-

یمن کی وزارت داخلہ کی تازہ ترین رپورٹ اور اعداد و شمار کے مطابق اس ملک کے خلاف چھبیس مارچ سے جاری حملوں میں اب تک تقریبا دو ہزار چھ سو شہری شہید جبکہ آٹھ ہزار سات سو کے قریب زخمی ہوئے ہیں- یمنی پریس کی ویب سائٹ کے مطابق شہید ہونے والوں میں چارسو انچاس بچے اور تین سو باون خواتین جبکہ زخمیوں میں سات سو اٹھتّر بچے اور چھے سو انیس خواتین شامل ہیں- سعودی حکومت نے یمن پر سو دنوں کے دوران اس ملک کی سڑکوں، ہوائی اڈوں، اسکولوں اور بنیادی تنصیبات کو تباہ کرنے کے علاوہ رہائشی علاقوں کو بھی بھاری نقصان پہنچایا نیز اس ملک کا ظالمانہ محاصرہ کر رکھا ہے- یمن پر سعودی جارحیت میں تباہی و بربادی اور عام شہریوں کی جانوں کی ضیاع کے علاوہ سعودی حکومت کو کچھ حاصل نہیں ہوا ہے- ستّر فیصد سے زائد ہسپتال اور طبی مراکز بھی تباہ ہو گئے- یمن کی وزارت صحت کے ترجمان نے کہا ہے کہ جارح سعودی حکومت نے زخمیوں کو لے جانے والی ایمبولنس گاڑیوں پر بھی بم برسائے اور جنگوں کے بین الاقوامی قوانین اور معیارات کو پامال کیا- یمن کی وزارت صحت کے ترجمان نے بمباری سے متاثرہ علاقوں میں خطرناک بیماریوں کے پھیلنے کی بابت بھی خبردار کیا ہے- واضح رہے کہ سعودی حکومت، عمان کے علاوہ علاقے کے نو عرب ملکوں کے اتحاد اور امریکہ کی حمایت سے چھبیس مارچ سے یمن کے خلاف بھرپور حملے جاری رکھے ہوئے ہے تاکہ یمن کے مستعفی اور مفرور صدر منصور ہادی کو دوبارہ اقتدار میں لا سکے اور ساتھ ہی یمن کے انقلابی شہریوں کو، کہ جنہوں نے ملک میں امن و سلامتی قائم کر رکھی ہے، اقتدار میں آنے سے روک سکے- یہ ایسی حالت میں ہے کہ یمن کے انقلابی عوام سعودی جارحیت کے بدستور مقابلہ کر رہے ہیں اور انھوں نے تاکید کے ساتھ اعلان کیا ہے کہ بیرونی جارحیت کے مقابلے میں ہرگز گھٹنے نہیں ٹیکیں گے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Nov 13