Sunday - 2018 Nov 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 77988
Published : 5/7/2015 10:47

فلسطینی قیدیوں کا تبادلہ، حماس کی شرطیں

تحریک حماس نے فلسطینی قیدیوں کے تبادلے کے سلسلے میں اپنی شرطوں کا اعلان کیا ہے- فلسطین کے انفارمیشن سینٹر کی رپورٹ کے مطابق تحریک حماس کے سیاسی دفتر کے رکن موسی ابو مرزوق نے ہفتے کے روز فلسطینی قیدیوں کے تبادلے کے لئے صیہونی حکومت کے ساتھ انجام پانے والے کسی بھی ممکنہ معاہدے پر دستخط کے سلسلے میں تحریک حماس کی شرطوں پر تاکید کی ہے۔ موسی ابو مرزوق نے کہا کہ تحریک حماس کی اہم شرط یہ ہے کہ صیہونی فوجیوں کے ساتھ فلسطینی قیدیوں کے تبادلے کے سلسلے میں ان چوّن فلسطینی قیدیوں کو رہا کیا جائے جو ایک معاہدے کے تحت صیہونی جیلوں سے رہا ہونے کے بعد دوبارہ قیدی بنا لئے گئے- تحریک حماس کے سیاسی دفتر کے رکن نے غاصب صیہونی حکومت کے ساتھ جنگ بندی کے سلسلے میں کہا کہ تحریک حماس کے اراکین صیہونی حکام سے ملاقات نہیں کرتے ہیں اور مصر میں بالواسطہ مذاکرات غزہ کی جنگ کے ساتھ ہی اختتام پذیر ہو گئے- صیہونی فوجیوں کے ساتھ فلسطینی قیدیوں کا تبادلہ، اسرائیلی جیلوں سے فلسطینی قیدیوں کی رہائی کا ایک راستہ ہے- واضح رہے کہ اکتوبر دو ہزار گیارہ میں تحریک حماس اور صیہونی حکومت کے درمیان قیدیوں کے تبادلے کے سمجھوتے کی بنیاد پر صیہونی فوجی گلعاد شالیت کی رہائی کے بدلے میں ایک ہزار ستّائیس فلسطینی قیدی صیہونی جیلوں سے رہا ہوئے تھے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 Nov 18