Tuesday - 2018 Dec 11
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 78121
Published : 6/7/2015 14:27

یمن کے بحران کا واحد حل جنگ بندی اور مذاکرات ہیں

اسلامی جمہوریہ ایران کے نائب وزیر خارجہ نے جنگ بندی اور مذاکرات کو بحران یمن کا واحد حل قرار دیا ہے- ارنا کی رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے یمن کے امور میں اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے خصوصی نمائںدے کے ساتھ ٹیلی فونی گفتگو کے دوران جنگ بندی اور مذاکرات کو یمن کے بحران کا واحد حل قرار دیا ہے- حسین امیر عبداللہیان نے اس ٹیلی فونی گفتگو میں کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران جنگ بندی، محاصرے کے خاتمے، یمنی گروہوں کے موثر مذاکرات اور اس ملک میں سیاسی عمل کی تکمیل پر تاکید کرتا ہے- اسلامی جمہوریہ ایران کے نائب وزیر خارجہ حسین امیر عبداللہیان نے مزید کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے یمن پر غیر ملکی حملوں کے آغاز میں ہی صراحت کے ساتھ کہہ دیا تھا کہ سعودی عرب کا حملہ ایک اسٹریٹیجک غلطی ہے اور اس کا واحد نتیجہ یمنی عوام کے قتل عام اور خلیج فارس کے حساس علاقے میں دہشت گردی اور بدامنی پھیلنے کی صورت میں برآمد ہو گا- ان کا مزید کہنا تھا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کا موقف ہے کہ یمن کی سیاسی جماعتیں اور گروہ اقوام متحدہ کی نگرانی میں پائیدار سمجھوتے تک پہنچ سکتے ہیں- اس ٹیلی فونی گفتگو میں یمن کے امور میں اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کے خصوصی نمائندے اسماعیل ولد الشیخ احمد نے بھی یمن میں جنگ بندی کے لیے اپنی کوششوں کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران کی حمایت، جنگ کے فوری خاتمے اور یمن کے عوام کی مشکلات میں کمی سے متعلق انجام دی جانے والی کوششوں کی تقویت کا باعث بنے گی- اسماعیل ولد الشیخ احمد کا مزید کہنا تھا کہ یمن میں انسانی صورتحال بہت زیادہ ابتر ہو چکی ہے اور اب جنگ بندی اور مذاکرات کے ذریعے مشکلات کو حل کرنے کے سوا کوئی چارہ نہیں ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Dec 11