Tuesday - 2018 Oct. 23
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 78240
Published : 7/7/2015 17:11

بحرین: آل خلیفہ داعش کی دراندازی کی ذمہ دار

بحرین میں ہیومن رائٹس واچ کے شعبہ مذہبی آزادی کے سربراہ نے آل خلیفہ حکومت کو داعش دہشت گردوں کے بحرین میں داخل ہونے کا ذمہ دار قرار دیا ہے-

بحرین کی جمعیت الوفاق ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق بحرین میں ہیومن رائٹس واچ کے شعبہ مذہبی آزادی کے سربراہ شیخ میثم سلمان نے تکفیری دہشت گردی کو اپنے ملک میں ایک درآمدی وجود سے تعبیر کیا- انہوں نے کہا کہ بلا شبہ آل خلیفہ حکومت ٹارگٹڈ کارروائیوں میں اڑتیس شیعہ مساجد کو شہید کرکے داعش کے بحرین میں داخل ہونے کا باعث بنی ہے- شیخ میثم سلمان نے تکفیری افکار و نظریات کی ترویج کی روک تھام کے لئے، بحرین میں شیعہ مساجد کو مسمار کرنے والوں پر مقدمہ چلانے کا مطالبہ کیا- انہوں نے کہا کہ بحرینی شیعوں کو تباہ کرنے کے مقصد سے انتہا پسند سلفی گروہوں کے اقدامات پر ذمہ دار حکام اور فریقوں کی خاموشی نے ملک میں باطل افکار و نظریات کے فروغ کے لئے حالات سازگار بنائے ہیں- بحرین کے سرگرم کارکنوں کے مطابق آل خلیفہ حکومت داعش کو بطور ہتھکنڈا استعمال کر کے، شیعہ مسلمانوں کے دینی مراکز اور مساجد پر تسلط جمانے کے اپنے خوابوں کو عملی شکل دینے میں کوشاں ہے- واضح رہے کہ داعش دہشت گردوں کے سرغنہ کی جانب سے بحرین میں دہشت گردانہ کارروائیاں انجام دینے کی براہ راست دھمکی کے بعد عینی شاہدین نے کہا ہے کہ انھوں نے داعش کے سینکڑوں پوسٹر منامہ کے مغرب میں واقع عین الدار علاقے کی مسجد کے اطراف میں چسپاں دیکھے ہیں-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Oct. 23