Sunday - 2018 Dec 16
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 78823
Published : 15/7/2015 19:37

افغان طالبان: جنگ اور مذاکرات ایک ساتھ

عید الفطر کے موقع پر افغان طالبان گروہ نے کابل حکومت کے ساتھ جنگ جاری رکھنے پر تاکید کرتے ہوئے افغان حکومت کے ساتھ مذاکرات بھی جاری رکھنے کا اعلان کیا ہے۔ بدھ کے روز افغان طالبان کے سرغنہ ملاعمر نے ویب سائٹ پر ایک بیان جاری کرکے اعلان کیا ہے کہ حکومت مخالف مسلحانہ کاروائیوں کے ساتھ ساتھ، سیاسی اور امن پسندانہ راہ حل بھی ایک قابل قبول طریقہ ہے۔ ملاعمر نے کہا کہ کابل حکومت کے ساتھ امن مذاکرات میں کوئی حرج نہیں ہے۔ ملا عمر کا یہ ردعمل طالبان اور افغان حکومت کے مابین مشترکہ مذاکرات کے ایک ہفتے کے بعد سامنے آیا ہے۔ طالبان گروہ اور افغان حکومت کے مابین گذشتہ چھے جولائی کو امریکہ اور چین کی زیر نگرانی مذاکرات کا پہلا دور منعقد ہوا تھا۔ ان مذاکرات میں دونوں فریقوں نے عیدالفطر کے بعد مذاکرات جاری رکھنے کا عزم ظاہر کیا ہے۔ طے شدہ منصوبے کے مطابق مذاکرات کے دوسرے دور میں دونوں فریق اپنے مطالبات پیش کریں گے۔ ابھی مذاکرات کی جگہ اور وقت کا اعلان نہیں کیا گیا ہے تاہم افغان حکومت کے ایک مذاکرات کار کا کہنا ہے کہ مذاکرات کا یہ دور، چین میں برگزار ہوگا۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Sunday - 2018 Dec 16