Tuesday - 2018 Sep 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 79177
Published : 22/7/2015 17:12

فلسطینی قیدیوں کی تعلیم پر پابندی کا صیہونی منصوبہ

صیہونی حکومت کی پارلیمنٹ کنیسٹ کے ایک رکن نے فلسطینیوں کے خلاف ایک نئے منصوبے کا مسودہ پیش کیا ہے- صیہونی حکومت نے نسل پرستانہ اقدامات جاری رکھتے ہوئے اس حکومت کی پارلیمنٹ کنیسٹ کے رکن نے فلسطینی مسلمانوں کے خلاف ایک نئے منصوبے کا مسودہ پیش کیا ہے- فلسطین الیوم ویب سائٹ کی رپورٹ کے مطابق صیہونی پارلیمنٹ کے ایک رکن "شارون گال" نے ایک منصوبے کا مسودہ پیش کیا ہے کہ جس کی بنیاد پر فلسطینی قیدی، یونیورسٹی کی تعلیم سے محروم ہو جائیں گے- اس مسودے کی رو سے فلسطینی شہری اپنی قید کے دوران یونیورسٹی کی تعلیم حاصل کرنے سے محروم رہیں گے- یہ ایسی حالت میں ہے کہ بین الاقوامی قوانین کی رو سے کوئی بھی قیدی اپنی قید کی سزا کاٹنے کے دوران اپنی تعلیم جاری رکھ سکتا ہے- واضح رہے کہ اس وقت تقریبا سات ہزار فلسطینی، صیہونی حکومت کی جیلوں میں ابتر حالت میں قید کی صعوبتیں برداشت کر رہے ہیں-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Tuesday - 2018 Sep 18