Monday - 2018 Sep 24
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 79198
Published : 22/7/2015 21:3

ایٹمی معاہدہ کسی کے نقصان میں نہیں: صدر مملکت

ایران کے صدر ڈاکٹر حسن روحانی نے کہا ہے کہ ایران اور گروپ پانچ جمع ایک کا ایٹمی معاہدہ کسی کے نقصان میں نہیں ہے۔ صدر مملکت ڈاکٹر حسن روحانی نے بدھ کے دن کابینہ کے اجلاس میں کہا کہ اسلامی جمہوریہ ایران نے ایٹمی معاملے کے حل کے لئے جس راستے کا انتخاب کیا وہ مفید اشتراک عمل کا راستہ تھا اور سب نے دیکھا کہ ایٹمی مذاکرات میں یہ حکمت عملی کامیاب ثابت ہوئی۔ صدر مملکت نے ایران کے بارے میں اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل میں قرارداد نمبر، دو ہزار دو سو اکتّیس کی منظوری کی جانب اشارہ کرتے ہوئے کہا کہ ایران اب اقوام متحدہ کی ساتویں شق سے باہر نکل گیا ہے اور یہ ایک بہت بڑی کامیابی ہے۔ صدر مملکت ڈاکٹر حسن روحانی نے مزید کہا کہ ایران، یورینیم کی افزودگی سے متعلق اپنا حق حاصل کرنا چاہتا تھا اور آج اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل نے صاف الفاظ میں اسلامی جمہوریہ ایران میں یورینیم کی افزودگی کا حق تسلیم کر لیا ہے۔ ڈاکٹر حسن روحانی نے کہا کہ فریق مقابل یہ دعوی کرتا ہے کہ ایران اب ایک سال سے کم عرصے میں ایٹم بم نہیں بنا سکتا- صدر مملکت نے اسے ایک مضحکہ خیز دعوی قرار دیتے ہوئے کہا کہ ایرانی قوم کبھی بھی ایٹم بم کی تیاری کے درپے نہیں رہی ہے بلکہ وہ اسے اخلاق، شریعت اور رہبر انقلاب اسلامی کے فتوے کے منافی سمجھتی ہے۔ ڈاکٹر حسن روحانی نے تاکید کی کہ ایران کی دفاعی حکمت عملی میں اس طرح کے ہتھیاروں کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Sep 24