جمعه - 2019 مارس 22
ہندستان میں نمائندہ ولی فقیہ کا دفتر
Languages
Delicious facebook RSS ارسال به دوستان نسخه چاپی  ذخیره خروجی XML خروجی متنی خروجی PDF
کد خبر : 79912
تاریخ انتشار : 1/8/2015 14:7
تعداد بازدید : 7

عراق کو فوجی ساز و سامان فراہم کیا جائے گا، نیٹو

نیٹو نے اعلان کیا ہے کہ عراق کی فوجی طاقت و توانائی میں اضافہ کرنے کے لئے اس ملک کو فوجی سازوسامان فراہم کئے جائے گا۔
عراقی وزیر اعظم کے دفتر نے ایک بیان میں اعلان کیا ہے کہ نیٹو کے سیکریٹری جنرل ینس اسٹولٹنبرگ نے عراقی وزیر اعظم حیدرالعبادی سے ٹیلی فون پر گفتگو کرتے ہوئے عراق کو جنگی ساز و سامان فراہم کئے جانے سے متعلق نیٹو کے فیصلے سے آگاہ کیا ہے۔ عراقی وزیر اعظم کے دفتر کے بیان میں کہا گیا ہے کہ اس ٹیلیفونی گفتگو میں فریقین نے عراق کی سلامتی کی صورت حال، فوجی اہلکاروں کی تربیت، جنگی ساز و سامان کی فراہمی اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں نیٹو کے کردار کے بارے میں بھی گفتگو کی۔ اس گفتگو میں حیدرالعبادی نے بھی عراق کو فوجی ساز و سامان فراہم کئے جانے سے متعلق نیٹو کے فیصلے کو انتہائی اہم قرار دیا۔ انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ عراق کو دہشت گردوں کی جانب سے بچھائی جانے والی بارودی سرنگوں اور بموں کا پتہ لگانے کے لئے مخصوص وسائل کی شدید ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ بموں اور بارودی سرنگوں سے مالی اور جانی نقصان کے علاوہ عراقی افواج کی پیش قدمی میں بھی رکاوٹیں پیدا ہو جاتی ہیں۔ واضح رہے کہ نیٹو نے سن دو ہزار چودہ کے اواخر میں اعلان کیا تھا کہ عراقی حکومت کی جانب سے فوجی سازوسامان کی فراہمی کی درخواست، زیر غور ہے۔


نظر شما



نمایش غیر عمومی
تصویر امنیتی :