Friday - 2019 January 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 79914
Published : 1/8/2015 14:10

جلال الدین حقانی کی موت کی تصدیق

طالبان نے حقانی گروپ کے سرغنے جلال الدین حقانی کی موت کی تصدیق کر دی ہے۔
موصولہ رپورٹ کے مطابق افغان طالبان نے تصدیق کر دی ہے کہ حقانی گروپ کے سرغنے جلال الدین حقانی کی موت ایک سال قبل طبعی طور پر ہوئی تھی اور اسے افغانستان کے صوبۂ خوست میں دفن کیا گیا تھا۔ اس رپورٹ کے مطابق حقانی گروپ نے ایک بیان جاری کر کے باضابطہ طور پر جلال الدین حقانی کی موت کی تصدیق کی ہے۔ خبری ذرائع کے مطابق جلال الدین حقانی کی موت کے بعد ایک سال سے حقانی گروپ کی قیادت اس کے بیٹے سراج الدین حقانی نے سنبھالے رکھی ہے۔ واضح رہے کہ امریکا کی مالی مدد کے ساتھ افغانستان میں سنہ انیس سو اسّی میں حقانی گروپ وجود میں لایا گیا۔ جلال الدین حقانی کے تین بیٹے ڈرون حملوں میں ہلاک ہوئے جبکہ ایک بیٹا اسلام آباد میں قتل ہوا۔
جلال الدین حقانی کا ایک بیٹا انس حقانی افغانستان میں اتحادی افواج کی حراست میں ہے۔ جلال الدین حقانی امریکا کو انتہائی مطلوب افراد کی فہرست میں شامل تھا اور اس کے سر کی قیمت ایک کروڑ امریکی ڈالر مقرر تھی-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2019 January 18