Saturday - 2018 August 18
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 80035
Published : 3/8/2015 19:45

عدن ایئرپورٹ: مفرور وزیراعظم پر قاتلانہ حملہ

یمن کے مفرور اور مستعفی وزیر اعظم پر عدن ایئرپورٹ پر قاتلانہ حملہ ہوا ہے جس میں وہ بال بال بچ گئے- یمنی فوج کے ایک قریبی ذریعے نے اتوار کو الوقت ویب سائٹ کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا ہے کہ یمن کے مفرور اور مستعفی وزیر اعظم "خالد بحاح " مختصر سے وقت کے لئے عدن ایئرپورٹ پہنچے جہاں ان پر قاتلانہ حملہ ہوا تاہم اس حملے میں انھیں کوئی نقصان نہیں پہنچا- یمن کے مستعفی وزیر اعظم، آدھے گھنٹے تک عدن میں رکنے کے بعد دوبارہ سعودی عرب چلے گئے- یمن کے اس فوجی ذریعے نے اپنا نام ظاہر نہ کئے جانے کی شرط پر بتایا کہ عدن، اب سعودی اتحادیوں کے لئے پرامن نہیں رہا اور سعودی عرب خالد بحاح پر قاتلانہ حملے کی خبر کی پردہ پوشی کرنے کی کوشش کر رہا ہے تاکہ یمن کی مستعفی حکومت کے عہدیدار بدامنی کے باعث شہر عدن کا سفر کرنے سے گریز نہ کریں- سعودی ذرائع ابلاغ نے حالیہ ہفتوں میں کوشش کی تھی کہ عدن کی سیکورٹی کی صورت حال پرامن اور مفرور و مستعفی صدر منصور ہادی کے ایجنٹوں کے کنٹرول میں ظاہر کریں لیکن اس شہر میں اب بھی جھڑپوں کا سلسلہ جاری ہے- یمن کی عوامی انقلابی تحریک کے سینیئر رہنما احمد الجنید نے " خالد بحاح" کے دورے کے بارے میں کہا کہ اس دورے کا مقصد، عرب رائے عامہ کے درمیان یمن کے مفرور صدر کے عناصر کی کامیابی اور پیشقدمی ظاہر کرنا اور شمالی محاذ پر آل سعود اور اس کے ایجنٹوں کی ناکامیوں پر پردہ ڈالنا تھا اور اب خالد بحاح پر ہونے والے قاتلانہ حملے سے، کہ جس میں وہ بال بال بچ گئے، رائے عامہ کو دھوکا دینے کی سازش، ناکام ہو گئی-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Saturday - 2018 August 18