Monday - 2018 Sep 24
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 80045
Published : 3/8/2015 20:35

فلسطینیوں کے خلاف صیہونیوں کی جارحیت جاری

صیہونی بستیوں کے انتہاپسند صیہونیوں نے فلسطینیوں کی ایک بس پر حملہ کیا ہے- اطلاعات کے مطابق صیہونی بستیوں کے انتہا پسند صیہونی، فلسطینیوں کے خلاف اپنی جارحیت جاری رکھے ہوئے ہیں اور ایک تازہ جارحیت میں انہوں نے فلسطینیوں کی ایک بس پر حملہ کیا ہے جو صیہونی انتہا پسندوں کے ہاتھوں حال ہی میں شہید ہونے والے ایک شیر خوار فلسطینی بچے کی مجلس ترحیم میں شرکت کرنے والے فلسطینیوں کو واپس بیت المقدس لے جا رہی تھی- صیہونی انتہا پسندوں نے پتھروں اور شیشے کی بوتلوں سے فلسطینیوں کی بس پر حملہ کیا جس میں متعدد فلسطینی زخمی ہو گئے- ادھر صیہونی حکومت کے فوجیوں نے اتوار کے روز غزہ پٹی کے شمالی علاقے بیت حانون میں فلسطینیوں کی طرف فائرنگ کی جس کے نتیجے میں ایک سن رسیدہ شخص سمیت کئی فلسطینی شدید زخمی ہو گئے- دریں اثنا صیہونی فوجیوں نے اتوار کی رات کو فلسطینی نمازیوں کو مسجدالاقصی میں جانے سے روک دیا- اس کے بعد صیہونی فوجیوں اور احتجاجی فلسطینیوں کے درمیان جھڑپ ہوئی اور صیہونی فوجیوں نے فلسطینیوں پر فائرنگ کر دی- صیہونی فوجیوں نے مسجدالاقصی کے دروازے بند کر کے نمازیوں سے تفتیش شروع کر دی- اسی اثنا میں انتہا پسند صیہونیوں کا ایک گروہ صیہونی فوجیوں کے ساتھ مسجد الاقصی کے احاطے میں داخل ہو گیا- فلسطینی قیدیوں کی سوسائٹی کے ڈائریکٹر ناصر غوث نے بتایا کہ صیہونی بستیوں کے انتہاپسندوں نے صیہونی فوجیوں کے ساتھ مل کر فلسطینی نمازیوں سے لڑائی بھی کی اور صیہونی فوجیوں نے پانچ فلسطینیوں کو گرفتار کر لیا- مسجد الاقصی کے خلاف صیہونیوں کی جارحیت میں ایسے حالات میں شدت پیدا ہوئی ہے کہ جب صیہونی حکومت مسجد الاقصی میں فلسطینیوں کا داخلہ روز بروز مشکل تر بنا رہی ہے-


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Sep 24