Friday - 2018 Dec 14
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 80136
Published : 4/8/2015 12:51

صیہونی حکومت کے خلاف عالمی عدالت میں مقدمہ

فلسطینی انتظامیہ نے دریائے اردن کے مغربی کنارے میں ایک شیر خوار فلسطینی بچہ زندہ جلانے کی بنا پر صیہونی حکومت کے خلاف انٹرنیشنل کریمنل کورٹ میں مقدمہ درج کرا دیا ہے۔ موصولہ رپورٹ کے مطابق فلسطینی انتظامیہ کے وزیر خارجہ ریاض المالکی نے مغربی کنارے میں واقع دوما نامی دیہات پر انتہاپسند صیہونیوں کے حملے کے خلاف انٹرنیشنل کریمنل کورٹ میں پیر کے دن مقدمہ درج کرا دیا۔ فلسطینی انتظامیہ کے وزیر خارجہ کی جانب سے دی جانے والی درخواست میں کہا گیا ہے کہ دوما نامی دیہات پر صیہونیوں کے حملے میں فلسطین کے اٹھارہ ماہ کے شیر خوار علی سعد دوابشہ کو زندہ آگ میں جلا دیا گیا۔ ریاض المالکی نے کہا ہے کہ اس درخواست میں دوما پر کئے جانے والے حملے کی تفصیلات اور اس کے علاوہ صیہونیوں کی جانب سے فلسطینیوں پر کئے جانے والے تشدد اور جارحیت کو بیان کیا گیا ہے۔ فلسطینیوں نے جنیوا میں اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل میں بھی دوما نامی دیہات پر حملے کے بارے میں ایک رپورٹ تیار کی ہے۔ فلسطینی انتظامیہ کے سربراہ محمود عباس نے جمعے کے دن کہا تھا کہ صیہونی حکومت اس وحشیانہ حملے کی ذمہ دار ہے جس کے دوران فلسطین کا شیر خوار بچہ علی سعد دوابشہ آگ میں زندہ جل گیا۔ فلسطینی انتظامیہ کے ترجمان نبیل ابوردینہ نے بھی کہا ہے کہ اگر اسرائیلی کابینہ صیہونی بستیوں کی تعمیر پر اصرار اور صیہونیوں کی حمایت نہ کرتی تو یہ جرم واقع نہ ہوتا۔ واضح رہے کہ صیہونیوں نے جمعے کے دن مغربی کنارے میں واقع ایک دیہات پر حملہ کر کے دو گھروں کو آگ لگا دی اور ایک فلسطینی شیر خوار بچے کو زندہ آگ میں جلا دیا۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Friday - 2018 Dec 14