Monday - 2018 Oct. 22
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 80199
Published : 5/8/2015 15:35

پاکستان کابل کے ساتھ تعاون کرے

افغانستان کے صدر نے کہا ہے کہ کابل حکومت کو اسلام آباد کے ساتھ غیر اعلانیہ جنگ کا سامنا ہے۔ افغانستان کے صدر محمد اشرف غنی نے کہا ہے کہ اس وقت پاکستان کے ساتھ حالات کافی کشیدہ ہیں اور دونوں ممالک کے مابین غیر اعلانیہ جنگ کی صورت حال پائی جاتی ہے۔ رپورٹوں کے مطابق افغان صدر محمد اشرف غنی نے جرمنی میں ایک ویڈیو کانفرنس کے ذریعے پاکستان سے مطالبہ کیا کہ ایک ہمسایہ ملک کی حیثیت سے اشتعال انگیز اقدامات سے گریز اور طالبان اور دیگر دہشت گرد گروہوں کا مقابلہ کرنے کے لئے کابل حکومت کے ساتھ تعاون کرے۔ افغان صدر نے تاکید کے ساتھ کہا کہ حکومت مخالف مسلح گروہوں کو چاہئے کہ موجودہ مسائل کے حل کے لئے سیاسی طور و طریقہ اپنائیں۔ انہوں نے کہا کہ اس وقت افغانستان اور علاقے میں پائیدار امن کی بحالی اور جنگ و خونریزی کے خاتمے کے لئے امید کی ایک کرن پیدا ہوئی ہے۔ افغان صدر محمد اشرف غنی نے دہشت گردی کو افغانستان اور پاکستان کے لئے ایک بڑا خطرہ قرار دیتے ہوئے کہا کہ جارحیت کے خاتمے اور قیام امن کے لئے بنیادی طریقے سے مسئلے کا جائزہ لے کر سیاسی راہ حل اپنانا ہو گا- انھوں نے کہا کہ اس سلسلے میں علاقائی اور بین الاقوامی سطح پر بھی مکمل عزم پایا جاتا ہے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Oct. 22