Monday - 2018 Nov 19
Languages
دوستوں کو بھیجیں
News ID : 81050
Published : 19/8/2015 14:54

ایران: استقامت کے حلقوں کی حمایت جاری رہے گی

اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری علی شمخانی نے کہا ہے کہ صیہونی حکومت کے مذموم اہداف کے مقابلے میں استقامت کرنے والے حلقوں کی حمایت جاری رہے گی۔ اسلامی جمہہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکرٹریٹ کی رپورٹ کے مطابق علی شمخانی نے منگل کو تہران میں عراق کی مجلس اعلائے اسلامی کے سربراہ سید عمار حکیم سے ملاقات میں کہا ہے کہ ایٹمی مذاکرات، ایران کے طاقتور ہونے اور توسیع پسندی کے مقابلے میں ملت ایران کی استقامت کا مظہر ہیں۔ انہوں نے کہا ان اہداف میں بنیادی ترین ہدف، استقامت کی حمایت اور صیہونی حکومت کے مذموم اہداف کا مقابلہ کرنا ہے۔ علی شمخانی نے کہا کہ عراق میں دہشت گردی کا مقابلہ کرنے کے لئے پختہ عزم کی ضرورت ہے۔ انہوں نے کہا کہ داعش دہشت گرد گروہ ایک سیاسی فتنہ ہے، جو صیہونی حکومت کے مفادات کی راہ میں دینی اختلافات پھیلا رہا ہے۔ اسلامی جمہوریہ ایران کی اعلی قومی سلامتی کونسل کے سیکریٹری نے کہا کہ امریکہ داعش کو ختم کرنا نہیں چاہتا بلکہ اس دہشت گرد گروہ کو مشرق وسطی اور اسلامی ملکوں میں طویل مدت موجودگی کا جواز پیش کرنے کے لئے تشہیراتی مقاصد کی غرض سے استعمال کر رہا ہے۔ اس ملاقات میں سید عمار حکیم نے عراق کے تازہ ترین سیاسی اور زمیںی حقائق کی تفصیلات سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ عراق متحد ہو کر، ان بیرونی دشمنوں کی سازشوں کے مقابلے میں ڈٹ جائے گا جو عراق میں اختلافات پھیلانے کی منصوبہ بندی کر رہے ہیں۔ انہوں نے عراق میں تکفیری دہشت گردی کے خلاف رہبر انقلاب اسلامی کی حمایت اور ایران کی پشت پناہی پر شکریہ ادا کیا اور کہا کہ ان کا ملک، دہشت گردوں کو مکمل شکست دے کر ترقی کی راہ پر گامزن ہو جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ عراق، اس راہ میں مختلف ملکوں بالخصوص ہمسایہ ملکوں کے تعاون کا خیر مقدم کرتا ہے۔


آپکی رائے



میرا تبصرہ ظاہر نہ کریں
تصویر امنیتی :
Monday - 2018 Nov 19